لشکراسلام کے امیر ’’منگل باغ‘‘ ڈرون حملے میں ہلاک

خبر کا کوڈ: 1138953 خدمت:
منگل باغ

پاکستانی میڈیا کے مطابق، لشکراسلام کے امیر ’’منگل باغ‘‘ کی ہلاکت افغان صوبہ ننگرہار کے علاقے ’’خودی خولہ‘‘ میں ایک ڈرون حملے میں ہوئی ہے۔

تسنیم نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق، ذرائع کا کہنا ہے کہ لشکر اسلام کے امیر ’’منگل باغ‘‘ افغان صوبہ ننگرہار کے علاقے ’’خودی خولہ‘‘ میں ایک ڈرون حملے میں ہلاک ہوگیا ہے۔

کہا جاتا ہے کہ یہ حملہ 22 جولائی کی رات ننگرہار کے علاقے خودی خولہ میں کیا گیا تھا۔

ذرائع کے مطابق، ڈرون حملے میں منگل باغ شدید زخمی ہو گیا تھا، تاہم لشکراسلام نے منگل باغ کی ہلاکت کی تصدیق نہیں کی ہے۔

جنگ نیوز کے مطابق، انٹیلی جنس اور طالبان ذرائع نے منگل باغ کی ہلاکت کی تصدیق کردی۔

یاد رہے کہ حکومت پاکستان نے منگل باغ کے سر کی قیمت 2 کروڑ روپے مقرر کی تھی۔

انتہا پسند گروہ لشکر اسلام نے داعش کے ساتھ بیعت کے علاوہ، شام میں اس گروہ کی مدد کے لئے بہت زیادہ تعداد میں دہشت گرد بھی بھیجے ہیں۔

 

    تازہ ترین خبریں
    گردشگری
    خبرنگار افتخاری