ایران اور سعودی عرب کے بعد؛

افغانستان کی پاک چین اقتصادی راہداری منصوبے میں دلچسپی

خبر کا کوڈ: 1212396 خدمت: دنیا
پاک چین اقتصادی راہداری منصوبہ

پاکستان میں تعینات افغانستان کے سفیر عمر زاخیل وال کا کہنا ہے کہ پاک چین اقتصادی راہداری افغانستان کے لئے نہایت اہمیت کا حامل ہے۔

خبر رساں ادارے تسنیم کے مطابق، افغانستان کے سفیر عمر زاخیل وال نے پاک چین اقتصادی راہداری منصوبے کو افغانستان کے لئے ضروری قرار دیا ہے۔

پاکستان میں مقیم افغان سفیر کے بیان کے مطابق، پاک چین اقتصادی راہداری کا حصہ بن کر افغانستان کئی سالوں سے جاری جنگ کی تباہ کاریوں کا ازالہ کرسکتا ہے۔

انہوں نے اپنے بیان میں کہا کہ سی پیک ایک عظیم منصوبہ ہے جو نہ صرف پاکستان بلکہ افغانستان کے لیے بھی انتہائی اہمیت کا حامل ہے۔

افغان سفیر کا کہنا تھا کہ جو چیز پاکستان کےلیے اچھی ہے وہ پورے خطے کے لیے بھی فائدہ مند ہوگی جب کہ افغانستان اس عظیم منصوبے کا حصہ بن کر ملک میں جاری کئی عشروں پر محیط جنگ کی تباہ کاریوں اور نقصانات کاازالہ کرسکتا ہے۔

واضح رہے کہ اس سے قبل ایران کے صدر نے بھی وزیراعظم نواز شریف سے ملاقات میں پاک چین راہداری منصوبےکا حصہ بننے کی خواہش کا اظہار کیا تھا جب کہ سعودی عرب بھی اس منصوبے میں شامل ہونے کا خواہاں ہے۔

خطے میں پاک چین اقتصادی راہداری کی بڑھتی ہوئی مقبولیت، اس منصوبے کی کامیابی اور اہمیت کی ناقابل تردید دلیل ہے۔

    تازہ ترین خبریں
    خبرنگار افتخاری