پاک بھارت سرحدی کشیدگی میں ہندوستان کی بے رحمی اور اقوام متحدہ کی بےحسی ایک مستقل عنصر ہے

خبر کا کوڈ: 1217023 خدمت: پاکستان
بھارتی فوج

بھارتی فوج کی نکیال کے کیرالہ سیکٹر میں ایک بار پھر بلااشتعال فائرنگ کے نتیجے میں ایک نوجوان شہید جب کہ خواتین اور بچوں سمیت 5 افراد زخمی ہوگئے ہیں۔

خبررساں ادارے تسنیم کے مطابق، بھارتی فوج نے ایک بار پھر لائن آف کنٹرول کی خلاف ورزی کرتے ہوئے آزاد کشمیر میں تحصیل نکیال کے کیرالہ سیکٹر پر فائرنگ کر دی۔

پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) کے مطابق، بھارت کی اس تازہ جارحیت کے نتیجے میں ایک نوجوان شہید جب کہ 2 خواتین اور 2 بچوں سمیت 5 افراد زخمی ہوگئے۔

پاک افواج کی جوابی کاروائی، ایک بےگناہ نوجوان کی شہادت اور خواتین اور بچوں کا خون بہانے کے بعد بھارتی بندوقیں بالآخر خاموش ہو گئیں۔

ترجمان پاک فوج نے خبر دی ہے کہ بھارتی فوج کی بلا اشتعال فائرنگ سے شہید ہونے والے نوجوان کی شناخت 28 سالہ عبدالرحمان سے ہوئی جو پالانی گاؤں کا رہائشی تھا۔

جبکہ زخمیوں میں پالانی گاؤں سے ہی تعلق رکھنے والے 11 اور 17 سال کے 2 بچے، 48 اور 50 سالہ 2 خواتین شامل ہیں۔

یاد رہے کہ حالیہ ہفتوں میں بھارت کی جانب سے سرحدی قوانین کی خلاف ورزیوں میں شدت آئی ہے جس کا پاکستانی سیکیورٹی فورسز جواب تو دے دیتی ہیں لیکن اس معاملے کو بار بار مختلف فورم پر اٹھانے کے باوجود عالمی برادری اور اقوام متحدہ کی مجرمانہ خاموشی عام انسان کی عقل سے بالاتر ہے۔

معمول یہ بن چکا ہے کہ ہر چند روز بعد بھارت ایل او سی پر بلااشتعال فائرنگ کرتا ہے، پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ اس کی خبر دیتے ہیں، میڈیا اس کو نشر کرتا ہے، دنیا آگاہ ہوتی ہے اور پھر خاموشی!!

اور یہ خاموشی بھارت کی ایل او سی پر فائرنگ کی تڑتڑاہٹ سے ایک بار پھر ٹوٹتی ہے اور دوبارہ وہی عمل دہرایا جاتا ہے جو بیان کیا جا چکا ہے۔

اور واضح رہے کہ اس تمام عمل میں بھارت کی بے رحمی اور اقوام متحدہ کی بےحسی ایک مستقل عنصر ہے۔

    تازہ ترین خبریں
    خبرنگار افتخاری