ایم ڈبلیو ایم رہنما کی علامہ مرزا یوسف حسین سے ملاقات؛

محب وطن دہشت گردی، کرپشن اور لاقانونیت کے خاتمے کیلئے متحد ہو جائیں/ نیا جرنیل احسن کردار ادا کرے

خبر کا کوڈ: 1253855 خدمت: اسلامی بیداری
راجا ناصر عباس در دفتر منطقه‌ای تسنیم

ایم ڈبلیو ایم سربراہ نے نئے آرمی چیف سے اس مطالبے کے ساتھ کہ ملک کے باسیوں کو امن و سکون کی زندگی فراہم کرے، محب وطن پاکستانیوں سے بھی مطالبہ کیا ہے کہ وہ دہشت گردی، کرپشن اور لاقانونیت کے خاتمے کیلئے متحد ہو جائیں

خبر رساں ادارے تسنیم کے مطابق، مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے سربراہ علامہ راجہ ناصر عباس جعفری نے علامہ مرزا یوسف سے ضمانت پر آزادی کے بعد کراچی میں ملاقات کی۔

اس موقع پر راجہ ناصر کا کہنا تھا کہ حب الوطنی کا تقاضہ یہ ہے کہ پاکستان سے دہشت گردی، کرپشن اور لاقانونیت کا خاتمہ کیا جائے، ہر وہ آواز جس سے تفرقہ کی بو آئے دشمن کی آلہ کار ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ علماءے کرام اتحاد و وحدت کے پیغام کا پرچار کرکے دشمن کی سازشوں کو ناکام بنائیں۔

وحدت مسلمین کے سربراہ کا مزید کہنا تھا کہ نئے آرمی چیف جنرل قمر باجوہ پاکستان کی سالمیت کی خاطر ملک کے اثاثوں پر حملے کرنے والے دہشت گردوں کیخلاف آپریشن کا آغاز کریں۔

اس موقع پر علامہ باقر زیدی، علامہ ظہیرالحسن نقوی، میثم عابدی، علامہ علی انور جعفری، علامہ مبشر حسن، علامہ اظہر نقوی، انجینئر رضا نقوی سمیت دیگر رہنما بھی موجود تھے۔

علامہ راجہ ناصر عباس جعفری نے کہا کہ آج موجودہ حالات میں ضروری ہے کہ پوری پاکستانی قوم اپنے وطن سے دہشت گردی، کرپشن اور لاقانونیت کے خاتمے کیلئے متحد ہو جائیں۔ دوسری جانب، کرپشن ملک کی جڑوں کو کھوکھلا کررہی ہے دہشت گردی کا شکار محب وطن عوام کو ظالموں کی صف میں کھڑا کرنے کی سازشیں ہورہی ہیں، انصاف کا تقاضہ تو یہ ہے کہ ظالم کو اس کے ظلم کی سزا دی جائے اور مظلوم کی داد رسی کی جائے، لیکن ہمارے ریاستی اداروں کا دستور ہی نرالہ ہے کہ بیلنس پالیسی کے نام پر محب وطن عوام اور علماء کرام کو دہشت گردوں کے برابر کھڑا کیا جارہا ہے۔

انہوں نے اعتراف کیا کہ علامہ مرزا یوسف حسین کی شیعہ سنی اتحاد کیلئے خدمات کسی سے ڈھکی چھپی نہیں ہیں، ان کو اٹھارہ روز ایک ایسے مقدمہ میں بلاجواز گرفتار کئے رکھنا کہ جس میں وہ ملوث ہی نہیں، ریاستی اداروں کا قابل مذمت فعل ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ اگر ہمارے ریاستی ادارے پاکستان کی سلامتی چاہتے ہیں تو کالعدم جماعتوں کی سرگرمیوں پر پابندی عائد کرتے ہوئے پاکستان سے دہشت گردی، کرپشن اور لاقانونیت کا خاتمہ کریں۔

مجلس وحدت مسلمین کے سیکرٹری جنرل نے نئے آرمی چیف جنرل قمر باجوہ سے بھی مطالبہ کیا کہ وہ احسن کردار ادا کر کے پاکستان کی سالمیت کی خاطر ملک کے اثاثوں پر حملے کرنے والے دہشت گردوں کیخلاف آپریشن کا آغاز کریں، تاکہ وطن کو دہشت گردی سے نجات دی جاسکے، اور ملک کے باسی امن و سکون سے زندگی گزار سکیں۔

    تازہ ترین خبریں
    خبرنگار افتخاری