اسلامی جمہوریہ پاکستان کے بانی اور عظیم قائد "محمد علی جناح" کی 141ویں سالگرہ/ تصویری رپورٹ

خبر کا کوڈ: 1277139 خدمت: پاکستان
جناح2

برصغیر پاک و ہند کے مسلمانوں کے عظیم رہنما اور اسلامی جمہوریہ پاکستان کے بانی "محمد علی جناح" کا 141واں یوم ولادت قومی جوش و جذبے سے منایا جارہا ہے۔

خبر رساں ادارے تسنیم کے مطابق، برصغیر پاک و ہند کے مسلمانوں کے عظیم قائد محمد علی جناح (پیدائشی نام محمد علی جناح بہائی)، 25 دسمبر 1876ء کو کو پیدا ہوئے اور 11 ستمبر 1948ء کو دار فانی وداع کر گئے۔

قائد اعظم محمد علی جناح نامور وکیل، سیاست دان اور بانی پاکستان تھے۔

محمد علی جناح 1913ء سے لے کر پاکستان کی آزادی 14 اگست 1947ء تک آل انڈیا مسلم لیگ کے سربراہ رہے، پھر قیام پاکستان کے بعد اپنی وفات تک، وہ ملک کے پہلے گورنر جنرل رہے۔ سرکاری طور پر پاکستان میں آپ کو قائدِ اعظم یعنی سب سے عظیم رہبر اور بابائے قوم یعنی قوم کا باپ بھی کہا جاتا ہے۔

جناح کا یومِ پیدائش پاکستان میں قومی تعطیل کے طور پر منایا جاتا ہے۔

پاکستان بھر میں آج (25 دسمبر) برصغیر پاک و ہند کے مسلمانوں کے عظیم رہبر محمد علی جناح کی 141ویں سالگرہ ملی جوش و جذبے سے منائی جارہی ہے۔

قائد اعظم محمد علی جناح کے 141 ویں یوم ولادت کے موقع پر ملک بھر میں تمام چھوٹے بڑے شہروں، قصبوں اور دیہات  میں سرکاری و غیر سرکاری تنظیموں و سیاسی جماعتوں کے زیر اہتمام پروقار تقریبات، سیمینارز، کانفرنسز، مذاکروں، مباحثوں کا انعقاد کیا ہے۔

دن کا آغاز وفاقی و صوبائی دارالحکومتوں میں توپوں کی سلامی سے ہوا جب کہ نماز فجر کے بعد بابائے قوم کے درجات کی بلندی، ملک کی بقا و سلامتی اور امن و ترقی کے لیے خصوصی دعائیں مانگی گئیں، یوم قائد کی مناسبت سے سب سے اہم تقریب کراچی میں مزار قائد پر ہوئی جہاں مزار قائد پر گارڈز کی تبدیلی کی پروقار تقریب منعقد ہوئی، تقریب کے مہمان خصوصی کمانڈنٹ پی ایم اے کاکول میجر جنرل عبداللہ ڈوگر تھے، تقریب میں گارڈز کے فرائض پی ایم اے کاکول کےکیڈٹس کو سونپ دیے گئے۔

بابائے قوم کی خدمات اور ان کی تعلیمات کو اجاگر کرنے کے لیے ریڈیو اور ٹی وی چینلز پر خصوصی پروگرام نشر کئے جارہے ہیں جب کہ پرنٹ میڈیا میں بھی خاص مضامین کی اشاعتوں کا اہتمام کیا گیا ہے، متعدد مقامات پر بابائے قوم کی سالگرہ کی مناسبت سے کیک کاٹے جارہے ہیں جب کہ صوبائی دارالحکومتوں میں بانی پاکستان کی انتہائی نادر، نایاب اور تاریخی تصاویر اور ان کے زیر استعمال اشیا کی نمائش بھی منعقد کی گئی ہے۔

    تازہ ترین خبریں
    خبرنگار افتخاری