قانون قدرت، 6 افراد کے قاتل کو قرار واقعی سزا فی الفور مل گئی

خبر کا کوڈ: 1294401 خدمت: پاکستان
حمزہ

تھانہ صدر واہ کے علاقہ میں گھریلو تنازعہ پر چار خواتین سمیت چھ افراد کو قتل کر کے فرار ہونے والا مرکزی ملزم موٹر وے ایم ٹو پر ٹریفک حادثہ میں جاں بحق ہو گیا۔ حادثہ میں ایک ہی خاندان کے چھ افراد زخمی بھی ہوئے تھے۔

خبر رساں ادارے تسینم کی رپورٹ کے مطابق حمزہ نامی نوجوان جس نے واہکینٹ راولپنڈی میں اپنی خالہ اور اس کے بیٹے سمیت 6 افراد کو جائیداد کے تنازعے پر قتل کردیا تھا، پولیس ذرائع کے مطابق، فرار ہوتے ہوئے پنڈی بھٹیاں کے مقام پر ایک گاڑی سے اپنی کار ٹکرا دی اور موقع پر ہی جاں بحق ہوگیا۔

تفصیلات کے مطابق تھانہ صدر واہ کے علاقہ میں گھریلو تنازعہ پر چار خواتین سمیت چھ افراد کو قتل کر کے فرار ہونے والا مرکزی ملزم موٹر وے ایم ٹو پر ٹریفک حادثہ میں جاں بحق ہو گیا۔

حادثہ میں ایک ہی خاندان کے چھ افراد زخمی بھی ہوئے تھے۔

تھانہ صدر واہ کے علاقہ نوسر شرفی میں خاندانی جھگڑے پر امیر حمزہ نامی ملزم نے اندھادھند فائرنگ کر کے اپنی خالہ فوزیہ بی بی، روبینہ، رضیہ سلطانہ، ثناء، احتشام اور جاوید کو فائرنگ کر کے قتل کر دیا تھا۔

ملزم امیر حمزہ کار نمبر LZP-7570 پر فرار ہو کر لاہور جا رہا تھا کہ اسکی کارموٹر وے ایم ٹو پنڈی بھٹیاں انٹر چینج کے قریب آگے جانے والی کار سے ٹکرا گئی جس کے نتیجہ میں سات افراد زخمی ہو گئے۔

ریسکیو 1122 اور موٹروے پولیس نے حادثہ میں زخمی ہونے والے تین بچوں سمیت سات افراد کو ٹی ایچ کیو ہسپتال پنڈی بھٹیاں منتقل کیا جہاں تشویشناک حالت کے پیش نظر امیر حمزہ کو فیصل آباد ریفر کیا گیا لیکن وہ زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے راستہ میں ہی دم توڑ گیا، پولیس تھانہ صدر پنڈی بھٹیاں نے امیر حمزہ کی لاش کو تحویل میں لے کر تفتیش شروع کر دی ہے۔

    تازہ ترین خبریں