ٹرمپ کو صدارتی عہدہ سنبھالنے کے بعد زبان قابو میں رکھنا ہوگی، سی آئی اے چیف

خبر کا کوڈ: 1298368 خدمت: دنیا
جان برنن

امریکا کی خفیہ ایجنسی کے سربراہ جان برینن نے نو منتخب صدر ڈونلڈ ٹرمپ کو خبردار کیا ہے کہ انہیں صدارتی عہدہ سنبھالنے کے بعد اپنی زبان پر قابو رکھنا ہوگا کیوں کہ حلف لینے کے بعد انہیں امریکی مفادات کو ترجیح دینا ہوگی۔

خبر رساں ادارے تسنیم کے مطابق امریکا کی خفیہ ایجنسی کے سربراہ جان برینن نے نو منتخب صدر ڈونلڈ ٹرمپ کو خبردار کیا ہے کہ  انہیں صدارتی عہدہ سنبھالنے کے بعد اپنی زبان پر قابو رکھنا ہوگا کیوں کہ ان کے حلف لینے کے بعد ریاست ہائے متحدہ امریکا کا مفاد اولین ہوگا۔

تفصیلات کے مطابق سی آئی اے چیف جان برینن کا کہنا ہے کہ نومنتخب صدر ڈونلڈ ٹرمپ جب بات کرتے ہیں یا ٹوئٹر پر کوئی پیغام دیتے ہیں تو انہیں یہ یقینی بنانا ہوگا کہ اس سے ملکی مفادات متاثر نہ ہوں کیوں کہ اب یہ معاملہ صرف ان کا نہیں بلکہ ریاست ہائے متحدہ امریکا کا ہے اور جب وہ اپنے عہدے کا حلف اٹھا ئیں گے تو سب سے مقدم ملکی مفاد ہوگا۔

انہوں نے کہا کہ ڈونلڈ ٹرمپ روس کی اہلیت اور نیتوں کے بارے میں زیادہ اداراک نہیں رکھتے اور روس کو ہر معاملے میں بری الذمہ قرار دینے میں احتیاط کا مظاہرہ کریں۔

سی آئی اے چیف نے کہا کہ امریکا کا صدر ٹوئٹر پر پیغامات کے ذریعے ملکی اہمیت کے اعلانات نہیں کر سکتا۔

واضح رہے کہ نو منتخب امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ تواتر کے ساتھ قومی اہمیت کے حامل معاملات پر ٹوئٹر پیغامات کےذریعے اعلانات کر رہے ہیں۔

 

    تازہ ترین خبریں
    خبرنگار افتخاری