بھارت کی روس اور اسرائیل سے 300 ارب ڈالر سے زائد مالیت کے جنگی سامان کی خریداری

خبر کا کوڈ: 1303003 خدمت: دنیا
بھارت اسلحہ

بھارت نے روس اور اسرائیل سے اینٹی ٹینک میزائل، ٹینک انجن، راکٹ لانچر اور دیگر اقسام کا جنگی سازو سامان خرید لیا ہے جو کہ بھارت میں پہنچنا شرو ع ہو گیا ہے۔

تسنیم نیوز ایجنسی کے مطابق بھارتی حکومت نے اسرائیل اور روس سے 3 سو ارب ڈالر سے زائد رقم کے اینٹی ٹینک میزائلز، ٹینک انجن، راکٹ لانچر اور دیگر اقسام کا جنگی سازو سامان خرید لیا ہے جو بھارت میں پہنچنا شرو ع ہو گیا جبکہ بھارت کی جانب سے سامان کے مزید آرڈر بھی تیار ہیں۔

بھارتی حکومت نے روس سے ہزاروں اینٹی ٹینک گائیڈڈ میزائل، ٹینکوں کے پرزے، روسی ساختہ ٹی 90 ٹینک اور راکٹ لانچرز سمیت مختلف اقسام کے سازو سامان کی خریداری کی ہے۔

اسی طرح اسرائیل سے بھارتی نیوی کیلئے ہزاروں میزائل، جدید ترین ڈرون طیارے منگوائے گئے ہیں۔

ان میں بھاری شدت والے بم، فوجی گاڑیاں اور ٹینکوں کیلئے حفاظتی سازوسامان کے ساتھ ساتھ گرنیڈ لانچر بھی شامل ہیں۔

حکومتی ذرائع نے تصدیق کرتے ہوئے کہا ہے کہ بھارتی حکومت نے اس مقصد کیلئے سینیئر افسران پر مشتمل دو مختلف وفد 2016ء کے اختتام پر روس اور اسرائیل بھیجے تھے۔

واضح رہے کہ زیادہ تر خریدے گئے ہتھیار اسرائیل اور روس کی مختلف بندرگاہوں سے خصوصی طیاروں کے ذریعے بھارت پہنچنا شروع ہو گئے ہیں۔
ماہرین کا خیال ہے کہ خطے میں اسلحے کی دوڑ کسی کے مفاد میں نہیں۔

دوسری جانب بھارت کی جانب سے ایسے اقدامات خطے میں دفاعی توازن میں بگاڑ پیدا کر دیا ہے۔

    تازہ ترین خبریں
    خبرنگار افتخاری