بھارتی انٹیلی جنس کا ذاکر نائیک پر خوفناک الزام عائد

خبر کا کوڈ: 1305253 خدمت: دنیا
ذاکر نائیک

بھارتی انٹیلی جنس ایجنس نے ڈاکٹر ذاکر نائیک پر بی جے پی لیڈر کے قتل کی مبینہ سازش کے الزام میں گرفتار سید ذاکر رحیم سے تعلق کا الزام عائد کیا ہے۔

خبررساں ادارے تسنیم کے مطابق، ڈاکٹر ذاکر نائیک کی مشکلات میں مزید اضافہ ہو گیا ہے۔

قریبا 2 ماہ قبل بھارتی کابینہ کی کمیٹی برائے سیکورٹی نے ذاکر نائیک کی متنازع تقاریر کے بعد ان کی غیرسرکاری تنظیم اسلامک ریسرچ فاؤنڈیشن پر نوجوانوں کو گمراہ کرنے کے الزام میں 5 سال کی پابندی لگا دی تھی۔

اب تازہ واقعہ میں بھارتی انٹیلی جنس نے دعویٰ کیا ہے کہ ڈاکٹر ذاکر نائیک کا تعلق سید ذاکر رحیم کے ساتھ ہے۔

خیال رہے کہ سید ذاکر رحیم پر بی جے پی لیڈر کے قتل کی سازش کا الزام ہے۔

سید ذاکر رحیم کو گذشتہ سال مئی میں سعودی عرب نے گرفتار کیا تھا اور آج سعودی عرب سے دہلی پہنچتے ہی ان کو نیشنل انوسٹی گیشن ایجنسی (این آئی اے) نے ایئر پورٹ سے ہی حراست میں لے لیا۔

نیشنل انوسٹی گیشن ایجنسی کا دعویٰ ہے کہ ذاکر رحیم سعودی عرب میں لوگوں کی ڈاکٹر ذاکر نائیک سے ملاقاتوں کا اہتمام کرتا تھا اور پھر بعد میں انہیں لوگوں کی برین واشنگ کرتے ہوئے لوگوں کو دہشت گردی کے لئے استعمال کرتا تھا۔

    تازہ ترین خبریں
    خبرنگار افتخاری