جنرل (ر) راحیل اور ان کی اہلیہ کو3 سال کا ملٹی پل ویزا جاری

سعودی حکومت نے سابق آرمی چیف جنرل (ر) راحیل شریف اور ان کی اہلیہ کو ملٹی پل ویزا جاری کر دیا۔

جنرل (ر) راحیل اور ان کی اہلیہ کو3 سال کا ملٹی پل ویزا جاری

خبر رساں ادارے تسنیم کے مطابق سعودی حکومت نے پاکستان کے سابق آرمی چیف راحیل شریف اور ان کی اہلیہ کو سعودی عرب کا 3سالہ ملٹی پل ویزا جا ری کر دیا ہے ۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ ان کے بچوں کو بھی3 ماہ کا ملٹی پل ویزا جاری کیا گیا ہے۔

واضح رہے کہ جنرل (ر) راحیل شریف پاکستان کے پہلی نجی شخصیت ہیں جنہیں 10 سال بعد پہلی مرتبہ یہ سہولت جاری کی گئی ہے۔

سفارتی ذرائع کا کہنا ہے کہ یہ بیشرفت اس بات کی عکاس ہے کہ سابق آرمی چیف جنرل (ر) راحیل شریف نے سعودی عرب کی جانب سے اسلامی فوجی اتحاد (آئی ایم اے) کی کمان سنبھالنے پررضامندی ظاہر کر دی ہے ۔

جنرل (ر) راحیل شریف وہاں جانے کی صورت میں سعودی دارالحکومت ریاض میں رہیں گے جہاں اس اتحاد کا مشترکہ آپریشن سینٹر قائم کیا گیا ہے۔

جس وقت یہ اتحاد قائم کیا گیا تھا اس وقت اِس کے 34 ارکان تھے اور یہ تعداد اب اومان کی شرکت کے ساتھ 41 تک جا پہنچی ہے۔ جنرل راحیل شریف اس اتحاد کے بانی کمانڈر ان چیف ہوں گے۔

یاد رہے اسلامی فوجی اتحاد 15 دسمبر 2015ء کو سعودی وزیر دفاع اور دوسرے ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان السعود نے قائم کیا تھا۔

جس وقت یہ اتحاد قائم کیا گیا تھا اُس وقت اِس کے 34 ارکان تھے اور یہ تعداد اب 41 تک جا پہنچی ہے۔

سب سے زیادہ دیکھی گئی پاکستان خبریں
اہم ترین پاکستان خبریں
اہم ترین خبریں
خبرنگار افتخاری