پاک افغان سرحد ایک ماہ بعد کھول دی گئی

خبر کا کوڈ: 1361889 خدمت: پاکستان
مرز پاکستان و افغانستان

پاک افغان طورخم سرحد 32 دن کے بعد آج صبح ہر قسم کی آمدورفت کیلئے کھول دی گئی ہے۔

خبر رساں ادارے تسنیم کے مطابق تقریبا ایک ماہ بعد کھلنی والی سرحد پر تجارتی قافلوں اور لوگوں کی نقل مکانی کا سلسلہ دوبارہ شروع ہوگیا ہے۔

سرحد کے دونوں طرف عوام کے ہجوم میں اضافی دیکھنے میں آرہا ہے۔

واضح رہے کہ وزیراعظم پاکستان میاں محمد نواز شریف نے گزشتہ روز پاک افغان سرحد کو فوری طور پر کھولنے کے احکامات جاری کرتے ہوئے کہا تھا کہ امید ہے افغان حکومت ان وجوہات کے تدارک کے لئے تمام ضروری اقدامات کرے گی جن کی بناء پر یہ قدم اٹھایا گیا تھا۔

وزیراعظم آفس کے میڈیا ونگ کی طرف سے پیر کو جاری بیان کے مطابق وزیراعظم نے کہا تھا کہ باوجود اس امر کے کہ حالیہ دنوں میں پاکستان میں ہونے والے دہشت گردی کے واقعات کے تانے بانے افغان سرزمین پر موجود پاکستان دشمن عناصر سے جا ملتے ہیں، ہم سمجھتے ہیں کہ دونوں ممالک کے درمیان صدیوں کے مذہبی، ثقافتی اور تاریخی روابط اور تعلق کے پیش نظر سرحدوں کا زیادہ دیر تک بند رہنا عوامی اور معاشی مفادات کے منافی ہے چنانچہ ہم نے فیصلہ کیا ہے کہ خیرسگالی کے جذبہ کے تحت یہ سرحدیں فوری طور پر کھول دی جائیں۔

وزیراعظم نے امید ظاہر کی تھی کہ جن وجوہات کی بناءپر یہ قدم اٹھایا گیا تھا، اس کے تدارک کے لئے افغانستان حکومت تمام ضروری اقدامات کرے گی۔

 

 

    تازہ ترین خبریں