شمالی کوریا امریکہ کشیدگی عروج پر/

چین: جنگ کسی پل بھی چھڑ سکتی ہے/ فوج آمادہ باش رہے

خبر کا کوڈ: 1379856 خدمت: دنیا
ارتش چین

امریکہ اور شمالی کوریا کے درمیان بڑھتی ہوئی کشیدگی ایسے مرحلے میں داخل ہو چکی ہے کہ چین نے ان ممالک میں کسی بھی پل جنگ چھڑنے کے خدشے کا اظہار کیا ہے۔

خبر رساں ادارے تسنیم کے مطابق چینی وزیرخارجہ وانگ یی کا کہنا ہے کہ امریکہ اور شمالی کوریا کے درمیان حالیہ کشیدگی کے بعد دونوں ممالک کے درمیان تصادم کا خدشہ ہے جو کسی بھی وقت ہوسکتا ہے۔

تاہم اس جنگ میں کسی کی بھی جیت نہیں ہوگی اور اس حوالے سے متعلقہ فریقین کو چوکنا رہنے کی ضرورت ہے۔

انہوں نے کہا کہ موجودہ حالات میں متعلقہ فریقین کو اشتعال انگیزی اور دھمکیوں سے دور رہتے ہوئے سنگین صورتحال کو آخری مرحلے تک نہیں لے جانا چاہیئے۔

دوسری جانب امریکہ نے اپنا جنگی بحری بیڑا شمالی کوریا کے قریب سمندر میں لاکھڑا کیا ہے جس کے بعد شمالی کوریا کے سربراہ نے دھمکی دی تھی کہ اگر جنگ مسلط کی گئی تو اس کا بھرپور جواب دیا جائے گا جب کہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے اپنے تازہ بیان میں کہا ہے کہ تمام مسائل کی وجہ شمالی کوریا ہے جس سے نمٹنے کی ضرورت ہے۔

تاہم چینی وزیر خارجہ وانگ ژی نے امریکہ کو خبردار کرتے ہوئے کہا ہے کہ شمالی کوریا کے پاس ایٹمی ہتھیاروں اور میزائلوں کا وسیع ذخیرہ ہے لہٰذا امریکہ حملہ کرنے سے گریز کرے۔

دوسری جانب امریکی ذرائع ابلاغ کا کہنا ہے کہ چینی مسلح افواج 5 فوجی علاقوں میں الرٹ ہوگئی ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ 25 ہزار چینی فوجیوں کو اس ملک کے مغرب میں فوجی ساز و سامان کے ہمراہ شمالی کوریا کی سرحد کی طرف جانے کیلئے الرٹ کردیا گیا ہے۔

    تازہ ترین خبریں