مقبوضہ وادی میں سوشل میڈیا کے بعد پاکستانی چینلوں کی نشریات پر بھی پابندی

خبر کا کوڈ: 1401678 خدمت: پاکستان
محبوبه مفتی

اخبار کی ترسیل اور سوشل میڈیا پر پابندی کے بعد مودی سرکار کے حکم پر کٹھ پتلی وزیراعلیٰ محبوبہ مفتی نے مقبوضہ کشمیر میں تمام ڈپٹی کمشنرز کو پاکستانی چینلوں کی نشریات پر پابندی عائد کرنے کی ہدایات جاری کردی ہیں۔

خبررساں ادارے تسنیم کے مطابق مقبوضہ کشمیر میں وزیراعلیٰ محبوبہ مفتی نےمودی سرکار کے احکامات پر تمام پاکستانی چینلز کو بند کرنے کا حکم دیا ہے جس پر فوری طور پر اقدامات کرتے ہوئے مقبوضہ کشمیر میں پاکستانی ٹی وی چینل کی نشریات بند کر دی گئیں۔

حکم نامے میں کہا گیا کہ ان نشریات کو نشر کرنے سے وادی کشمیر میں پرتشدد واقعات بڑھنے اور امن و امان کی صورتحال خراب ہونے کا خدشہ ہے۔

مقبوضہ کشمیر کی وزیراعلیٰ محبوبہ مفتی نےمزید کہا ہے کہ کیبل ٹیلیویژن آپریٹرز کے قانون کی دفع11 کے تحت ڈسٹرکٹ مجسٹریٹ قانون کی خلاف ورزی کرنے والے کیبل آپریٹرز پر بھاری جرمانے کے ساتھ ساتھ اس کا سامان ضبط کرنے کا اختیاررکھتے ہیں۔

یاد رہے کہ یہ پہلا موقع نہیں کہ مقبوضہ کشمیر میں حکام کی جانب سے عوام کی آواز دنیا تک پہنچنے کی کوشش کو روکا گیا ہو۔

واضح رہے کہ اس سے قبل پہلے وادی میں بڑھتی ہوئی مزاحمت کے بعد اخبار کی ترسیل، انٹرنیٹ سروسز فراہم کرنے والوں کو فیس بک، ٹویٹر اور واٹس ایپ جیسے سوشل میڈیا پلیٹ فارم بند کرنے کا حکم بھی دیا جاچکا ہے۔

    تازہ ترین خبریں