ٹرمپ کی جڑواں بہن کے بعد پیش خدمت ہے میسی کا جڑواں بھائی + تصاویر

خبر کا کوڈ: 1402385 خدمت: ایران
میسی

ایرانی شہر ہمدان سے تعلق رکھنے والے رضا پرستش معروف فٹبال کھلاڑی میسی سے اس قدر مشابہت رکھتے ہیں کے اگر ان دونوں کو ہمشکل جڑواں بھائی کہا جائے تو بےجا نہ ہوگا۔

خبررساں ادارے تسنیم نے گذشتہ روز اپنے قارئین کی دلچسپی کے لئے امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ سے حیرت انگیز طور پر متشابہ خاتون کی ایک رپورٹ دی تھی جسے سوشل میڈیا پر خوب پذیرائی مل رہی ہے۔

بعض منچلوں نے ان خاتون کو ٹرمپ کی جڑواں بہن بھی قرار دے دیا۔

اسی سلسلے کی اگلی کڑی ایرانی شہر ہمدان سے تعلق رکھنے والے رضا پرستش ہیں جو معروف فٹبال کھلاڑی میسی سے اس قدر مشابہت رکھتے ہیں کے اگر ان دونوں کو ہمشکل جڑواں بھائی کہا جائے تو بےجا نہ ہوگا۔

تاہم ایک ناخوشگوار صورتحال اس وقت پیدا ہو گئی جب ہمدان میں رضا پرستش کے ساتھ تصویر کھنچوانے کے خواہش مندوں کا اس قدر ہجوم اکٹھا ہو گیا کہ سڑک پر ٹریفک جام ہو گیا اور گاڑیوں کی لمبی قطاریں لگ گئیں۔

لہذا پولیس کو اسے منتشر کرنے کے لیے رضا کو تھانے لے جانا پڑ گیا۔ اس کے ساتھ ہی انھوں نے رضا کی کار بھی ضبط کر لی تاہم کچھ دیر بعد ان کو چھوڑ دیا گیا۔

یہ معاملہ چند ماہ قبل اس وقت شروع ہوا جب رضا پرستش کے والد نے ان کی تصویر بارسلونا کی 10 نمبر والی قمیض میں کھینچی۔ اس کے بعد سے 25 سالہ رضا نے میسی کی طرح داڑھی رکھ لی اور بال بھی انہی کی مانند کٹوانے شروع کر دیے۔

بس پھر کیا تھا، اس کے بعد اب رضا جہاں جاتے، ان کے ساتھ سیلفی کھنچوانے کے خواہش مندوں کا تانتا بندھ جاتا۔

اس سلسلے میں میسی کے ہمشکل رضا پرستش کا کہنا ہے کہ اب لوگ مجھے ایرانی میسی سمجھتے ہیں اور چاہتے ہیں کہ میں ان کی نقل کرتا رہوں۔

جب میں کہیں جاتا ہوں تو لوگ مجھے دیکھ کر دنگ رہ جاتے ہیں۔ مجھے خوشی ہے کہ میری وجہ سے لوگوں کو خوشی ملتی ہے اور یہ خوشی مجھے بہت زیادہ توانائی بخشتی ہے۔

واضح رہے آج کل رضا کا تمام وقت میڈیا کو انٹرویو دینے میں صرف ہو رہا ہے، حتیٰ کہ بعض کمپنیوں کی جانب سے انہیں ماڈلنگ کی بھی پیشکشں ہو رہی ہے۔

    تازہ ترین خبریں
    خبرنگار افتخاری