کلبوشن کے معاملے میں عالمی عدالت انصاف جانا بےسود رہے گا؛ بھارتی میڈیا کا دعوی

خبر کا کوڈ: 1404784 خدمت: پاکستان
کلبوشن یادو

بھارتی میڈیا نےاعتراف کیا ہے کہ پاکستان پہلے ہی اپنے دفاعی اور قومی معاملات پر بین الاقوامی عدالت برائےانصاف کے دائرہ اختیار کو ختم کر چکا ہے لہذا کلبوشن یادیو کے معاملے پر عالمی عدالت انصاف میں جانے کا کوئی فائدہ نہیں ہوگا۔

خبررساں ادارے تسنیم کے مطابق مایوس مودی سرکار کی اپنے جاسوس کو بچانے کی امیدوں پر بھارتی میڈیا ہی کے اس دعوی نے پانی پھیر دیا ہے کہ کلبوشن کے معاملے میں عالمی عدالت انصاف جانا بےسود رہے گا۔

بھارتی میڈیا نے کہا ہے کہ پاکستان پہلے ہی اپنے دفاعی اور قومی معاملات پر بین الاقوامی عدالت برائےانصاف کے دائرہ اختیار کو ختم کر چکا ہے لہذا کلبوشن یادیو کے معاملے پر عالمی عدالت انصاف میں جانے کا کوئی فائدہ نہیں ہوگا۔

بھارتی میڈیا کا یہ بھی کہنا ہے کہ پھانسی پر عمل درآمد روکنے کے لیے بین الاقوامی عدالت کو حکم دینا ہوتا ہے، اس معاملے میں ایسا نہیں ہوا۔

بین الاقوامی عدالت کے مراسلے سے واضح ہے کہ آئی سی جے کے فرانسیسی صدر نے پھانسی پر عمل درآمد روکنے کا کہا جبکہ بھارتی میڈیا خود اعتراف کررہا ہے کہ ایسا کوئی بھی فیصلہ یا حکم نامہ بین الاقوامی عدالت کی جانب سے جاری کیا جاتا ہے۔

اس سے پہلے بھارتی میڈیا نے یہ خبر نشر اور شائع کی تھی کہ انٹرنیشنل کورٹ آف جسٹس نے بھارتی حکومت کی درخواست پر کلبوشن یادیو کی پھانسی پر عملدرآمد روکنے کا حکم دیا ہے۔

 

    تازہ ترین خبریں