داعش کے خلاف جنگ کی تازہ ترین خبریں/ القیروان کے 36 دیہات آزاد

خبر کا کوڈ: 1409678 خدمت: دنیا
ارتش عراق

عراقی رضاکار فورس کے ترجمان نے خبر دی ہے کہ مغربی موصل کے القیروان کی آزادی کی مہم شروع ہونے کے بعد سے اب تک 36 گاوں آزاد کرا لئے گئے ہیں۔

خبر رساں ادارہ تسنیم کے نمائندے کی رپورٹ کے مطابق عراقی رضاکار فورس کے ترجمان احمد الاسدی نے مغربی موصل کے القیروان کی آزادی مہم کے نتیجے میں ہونے والی کامیابیوں کے بارے میں اعلان کیا۔

انہوں نے کہا کہ مغربی تلعفر کے علاقے القیروان کی آزادی کے لئے جاری محمد رسول اللہ صلی اللہ علیہ و آلہ و سلم آپریشن کے نتیجے میں اب تک 36 گاوں کو داعش کے ناپاک وجود سے پاک کرا لیا گیا ہے۔

اسدی نے القیروان کی آزادی کی عسکری اہمیت کو بیان کرتے ہوئے کہا کہ القیروان اور البعاج داعش کے مضبوط قلعے شمار ہوتے تھے۔

انہوں نے وضاحت دی کہ عراقی فوجوں کے ذریعہ تلعفر کا محاصرہ کئے جانے کے بعد داعش نے البعاج اور القیروان میں اپنے کمانڈ آفس کھولے جو اس عللاقہ کی اسٹریٹجک اہمیت کا پتہ دیتے ہیں۔

واضح رہے کہ عراقی عوامی رضاکار فورس نے جمعہ کی صبح کو القیروان اور اس کے اطراف کی بستیوں کی آزادی کی مہم شروع کی تھی۔ 

یہ علاقہ داعش کو امدادی سامان پہنچانے کا سب سے اہم راستہ مانا جاتا تھا۔

نینوا آپریشن کی مرکزی قیادت سے اعلان کیا گیا ہے کہ دہشت گردوں کیساتھ آہنی ہاتھوں سے لڑنے والی عراقی فوج نے موصل کے العریبی علاقے کو بھی دہشت گردوں کے قبضے سے آزاد کرا لیا ہے۔

یاد رہے کہ موصل کی آزادی آپریشن شروع ہونے کے بعد عراقی فوج، رضاکار دستے اور کرد پیشمرگہ فورس نے 100 دن کی طویل جدوجہد کے بعد موصل کے مشرقی حصے کو داعش سے آزاد کرانے میں کامیابی حاصل کی تھی جبکہ مغربی موصل کو آزاد کرانے کی مہم تاحال جاری ہے۔

    تازہ ترین خبریں