دنیا کا قدیم ترین پھل، جس کو کھانے کے بےتحاشہ فوائد

خبر کا کوڈ: 1423865 خدمت: دنیا
خرما در طارم

6000 سال قبل مسیح سے کاشت کیا جانے والا پھل جسے عربی زبان میں"تمر" کہاجاتا ہے، کا کھانا سنت نبوی صلی اللہ علیہ و آلہ وسلم ہے اور اس کو اردو زبان میں "کھجور"کہا جاتا ہے۔

خبر رساں ادارہ تسنیم: کھجور ایک ایسا پھل ہے جس کی کئی ہزار اقسام ہیں اور کئی میٹھے پھلوں میں سب سے زیادہ میٹھا پھل ہے۔

کھجور رسول صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم کا پسندیدہ ترین پھل ہے اور اس سے رمضان المبارک میں روزہ کھولنے کا بھی حکم ہے، جس کے کئی فوائد ہیں۔ 

کھجور میں فائبر، پوٹاشیم، کاپر، مینگنیز، میگنیشم اور وٹامن بی 6 جیسے اجزاء شامل ہوتے ہیں جو کہ متعدد طبی فوائد کا باعث بنتے ہیں۔

یہاں طبی سائنس کے تسلیم شدہ وہ فوائد جانیں جو کھجور کھانے سے آپ کو حاصل ہوسکتے ہیں۔

دماغی صحت بہتر بنائے

طبی جریدے جاما انٹرنل میڈیسین میں شائع ہوئے والی ایک تحقیق کے مطابق جسم میں وٹامن بی 6 کی مناسب مقدار دماغی کارکردگی میں بہتری اور اچھے امتحانی نتائج کے لیے فائدہ مند ثابت ہوتی ہے۔

دل کی صحت کے لیے بہترین

تحقیقات کے مطابق روزانہ انار کے جوس اور 3 کھجوروں کا استعمال دل کے امراض کے لیے بہت فائدہ مند ثابت ہوتا ہے۔ محققین کا کہنا ہے کہ انار اور کھجوریں اینٹی آکسائیڈنٹس سے بھرپور ہوتی ہیں جو دل کی شریانوں کے سخت ہونے اور سکڑنے کا خطرہ ایک تہائی یا 33 فیصد تک کم کردیتے ہیں۔

فالج سے بچاﺅ

ایک تحقیق میں بتایا گیا کہ روزانہ سو ملی گرام میگنیشم کا استعمال فالج کا خطرہ 9 فیصد تک کم کردیتا ہے اور جیسا بتایا جاچکا ہے کہ یہ جز کھجوروں میں کافی مقدار میں پایا جاتا ہے۔

نظام ہاضمہ کو بہتر اور قبض سے نجات دلائے

فائبر آنتوں کی صحت کے لیے انتہائی ضروری جز ہے اور قبض کی روک تھام کرتا ہے، کھجور میں جذب ہونے والا اور جذب نہ ہونے والا فائبر موجود ہوتا ہے جو کہ آنتوں کے نظام کی صفائی میں مدد دیتا ہے اور اسے اپنا کام موثر طریقے سے کرنے دیتا ہے۔

بلڈ پریشر میں کمی

کھجور میں شامل میگنیشم بلڈ پریشر میں کمی لانے میں بھی مدد دینے والا جز ہے، جبکہ اس میں موجود پوٹاشیم بھی جسم کے لیے فائدہ مند ہے جو دل کو مناسب طریقے سے کام کرنے اور بلڈ پریشر میں کمی لانے میں مددگار ثابت ہوتا ہے۔

ڈیوں کی مضبوطی

کھجور میں موجود مینگنیز، کاپر اور میگنیشم ایسے اجزاء ہیں جو ہڈیوں کو صحت مند رکھنے کے لیے ضروری ہوتے ہیں اور یہ بھربھرے پن کے مرض سے بچانے میں مددگار ثابت ہوتے ہیں۔

ورم کش

کھجور میگنیشم سے بھرپور ہوتی ہے اور یہ ایسا منرل ہے جو ورم کش خصوصیات رکھتا ہے۔ ایک تحقیق کے مطابق جب میگنیشم کا استعمال بڑھتا ہے تو کئی طرح کے ورم کی سطح میں کمی آتی ہے، جس سے خون کی شریانوں کے امراض، جوڑوں کے امراض، الزائمر اور دیگر بیماریوں کا خطرہ کم ہوتا ہے۔

ڈاکٹرز اور ماہرین کے مطابق جو لوگ استما کے مرض میں مبتلا ہوتے ہیں ان کے لیے بھی کھجور کا استعمال نہایت مفید ہے جبکہ کے کھجور کے استعمال کے ذریعے استما سے جلد چھٹکارہ بھی پایا جا سکتا ہے۔

    تازہ ترین خبریں