پاکستان کا افغان کرکٹ بورڈ کو دو ٹوک جواب/ تمام معاہدے ختم کردئے

خبر کا کوڈ: 1425926 خدمت: پاکستان
پی سی بی

پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) نے افغان کرکٹ بورڈ (اے سی بی) کی جانب سے لگائے جانے والے الزامات کو مسترد کرتے ہوئے تمام باہمی معاہدوں سے دستبردار ہونے کا اعلان کردیا۔

خبر رساں ادارے تسنیم کے مطابق کابل میں ہونے والے بم دھماکے کے بعد اے سی بی نے پاکستان کےساتھ دوستانہ میچز کی سیریز منسوخ کرتے ہوئے کرکٹ تعلقات ختم کرنے کا اعلان کیا تھا۔

افغان کرکٹ بورڈ کی جانب سے جاری کردہ اعلامیہ کے مطابق "ایسے ملک کے ساتھ دوستانہ میچز اور باہمی معاہدے ممکن نہیں ہیں جہاں پر دہشت گردوں کی محفوظ پناہ گاہیں ہیں۔"

پاکستان کرکٹ بورڈ نے بھی جواب میں ایک اعلامیہ جاری کرتے ہوئے کہا ہے کہ بورڈ کی ہمدردیاں دھماکے میں متاثرہ افراد اور ان کے لواحقین کے ساتھ ہیں تاہم ہم اے سی بی کی جانب سے جاری کردہ غیر ذمہ دارانہ بیان کو مسترد کرتے ہیں۔

جوابی بیان میں پاکستان کرکٹ بورڈ نے افغان کرکٹ بورڈ کے ساتھ تمام باہمی تعلقات اور دونوں ممالک کے مابین مستقبل میں ہونے والی سیریز کو منسوخ کر دیا۔

اعلامیہ میں کہا گیا ہے کہ پاکستان نے ہمیشہ افغانستان میں کرکٹ کی ترقی کو سراہا ہے جبکہ لاکھوں افغان پناہ گزین کے سامنے سب سے پہلے کرکٹ پاکستان میں ہی متعارف ہوئی۔

اعلامیہ میں بتایا گیا ہے کہ پاکستان نے گذشتہ کئی برسوں سے افغانستان میں موجود کرکٹرز کی مہارت کو بڑھانے میں مدد کی ہے جبکہ افغان کھلاڑیوں کی تقریبا ایک نسل نے پاکستان میں اپنی مہارت کو تیز کیا ہے۔

پی سی بی اعلامیہ کے مطابق افغان وفد جب پاکستان آیا تو کھیل کو سیاست سے دور رکھنے کی بات کی جبکہ اس وقت اے سی بی خود ہی سیاست کو کھیل سے منسلک کر رہا ہے۔

واضح رہے کہ افغانستان کے دارالحکومت کابل میں جرمن سفارت خانے کے قریب کار بم دھماکے کے نتیجے میں 100 افراد ہلاک اور 400 زخمی ہوگئے تھے۔

    تازہ ترین خبریں
    خبرنگار افتخاری