ایران کی سرکاری نیوز ایجنسی کے رپورٹر پر اسلام آباد میں حملہ

خبر کا کوڈ: 1426030 خدمت: ایران
میڈیا

ایران کی سرکاری نیوز ایجنسی (ایرنا) سے منسلک صحافی پر اسلام آباد میں نامعلوم افراد نے حملہ کیا جس کے نتیجے میں وہ زخمی ہوگئے۔

خبر رساں ادارے تسنیم کے مطابق اسلام آباد میں ایرانی نیوز ایجنسی کے بیورو چیف محمد رضا معافی نے ڈان کو بتایا کہ سیکٹر جی 9 میں رمضان کے حوالے سے معمول کے پروگرامات کی کوریج کے بعد ذیشان علی واپس سیکٹر جی 6 میں قائم نیوز ایجنسی کے دفتر آرہے تھے کہ موٹر سائیکل پر سوار دو افراد نے انھیں روکا اور تشدد کا نشانہ بنایا۔

انھوں نے مزید بتایا کہ دو افراد سادہ لباس میں ملبوس تھے اور ان کے پاس پستول اور چاقو تھا جبکہ ان کی موٹر سائیکل پر رجسٹریشن نمبر موجود نہیں تھا، انھوں نے ذیشان علی سے دو کیمرے چھینے اور اسے تشدد کا نشانہ بنایا۔

محمد رضا معافی کا مزید کہنا تھا کہ واقعے کے بعد ذیشان علی کو پاکستان انسٹیٹیوٹ آف میڈیکل سائنس منتقل کیا گیا جہاں اس کا علاج ہوا، اور 3 گھنٹے تک مشاہدے میں رکھنے کے بعد ہسپتال سے ڈسچارج کردیا گیا۔

انھوں نے کہا کہ واقعہ سہ پہر 1 بجے پیش آیا، مجھے اس تشدد کی وجہ سمجھ نہیں آئی کیونکہ ذیشان علی پاکستانی ہے اور وہ کسی غیر قانونی سرگرمیوں میں بھی ملوث نہیں اور وہ رمضان کی سرگرمیوں کے حوالے سے معمول کی کوریج کررہا تھا۔

ان کا کہنا تھا کہ واقعے کی تحقیقات کے حوالے سے پیش رفت جاننے کیلئے میں آج (جمعہ) کو تھانے بھی جاؤں گا۔

    تازہ ترین خبریں
    خبرنگار افتخاری