سعودی عرب میں یوسف قرضاوی کی کتابوں پر پابندی

خبر کا کوڈ: 1434161 خدمت: اسلامی بیداری
یوسف القرضاوی

سعودی عرب کی حکومت نے مصری نژاد قطری مفتی، اخوان المسلمین کے معنوی رہنما اور معروف عالم دین یوسف القرضاوی کی تمام کتب پر یونیورسٹیوں اور لائیبریریوں میں مکمل طورپر پابندی عائد کردی ہے۔

خبر رساں ادارے تسنیم کے مطابق سعودی اور قطر کے درمیان جاری تناو کے باعث ریاض حکومت نے اخوان المسلمین کے معروف رہنما یوسف القرضاوی کی تمام کتب پر پابندی عائد کردی ہے۔

سعودی عرب کے وزیر تعلیم احمد بن محمد العیسیٰ نے ایک فوری بیان جاری کرتے ہوئے تصدیق کی ہے کہ ملک بھر کی یونیورسٹیوں اور لائیبریریوں سے اخوان المسلمین کے رہنما کی تمام کتب کو جمع کیا گیا اور سعودیہ کے کسی اسکول یا یونیورسٹی میں ان کی کوئی کتاب موجود نہیں۔

سعودی وزارت تعلیم نے القرضاوی کی کتابوں کو طالبعلموں کے افکار کو خطرہ قرار دیا ہے۔

اس بیان کے مطابق سعودی وزیر تعلیم نے ملک بھر سے القرضاوی کی کتابوں کو جمع کرانے پر اطمینان کا اظہار کرتے ہوئے بتایا ہے کہ ان کی کتابوں کی مستقبل میں بھی اجازت نہیں دی جائیگی۔

یاد رہے کہ سعودی عرب سمیت کئی دیگر عرب ممالک نے قطر پر دہشتگردی کی حمایت کا الزام لگاتے ہوئے سفارتی روابط منقطع کئے ہیں جس کے باعث ریاض اور دوحہ کے درمیان تعلقات میں آئے روز کشیدگی بڑھ رہی ہے۔

    تازہ ترین خبریں