امریکہ کا صومالیہ پر ڈرون حملہ؛ 8 شدت پسند ہلاک

امریکہ نے 23 سال بعد صومالیہ پر پھر حملہ کیا، ڈرون بمباری سے 8 شدت پسند مارے گئے۔

امریکہ کا صومالیہ پر ڈرون حملہ؛ 8 شدت پسند ہلاک

خبررساں ادارے تسنیم کے مطابق پاکستان سمیت متعدد مسلمان ممالک پر ڈرون حملہ کرنے والے امریکہ نے ایک اور مسلمان ملک صومالیہ پر ڈرون حملہ کر دیا۔

امریکی فوج نے صومالیہ میں القاعدہ سے وابستہ شدت پسند گروپ الشباب کے خلاف پہلا ڈرون حملہ کیا۔

واضح رہے کہ صدر باراک اوبامہ نے اپنے دورحکومت میں امریکی فوج کو صومالیہ میں ڈرون حملے کرنے کی اجازت نہیں دی تھی۔

تاہم ڈونلڈ ٹرمپ نے پابندی ختم کرتے ہوئے ڈرون حملوں کی اجازت دے دی۔

پینٹاگون کی طرف سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ پہلے ڈرون حملے میں الشباب کے سپلائی سنٹر کو نشانہ بنایا گیا جس میں 8شدت پسند ہلاک ہوئے۔

یہ سنٹر صومالی دارالحکومت موغادیشو سے 185میل کے فاصلے پر واقع تھا اور گروپ کے مرکزی ٹریننگ سنٹرز اور کمپاﺅنڈ پوسٹس میں سے ایک تھا۔

امریکہ کا ماننا ہے کہ صومالیہ پر ڈرون حملے کرنے سے امریکی فوجی اڈوں کو محفوظ بنانے اور دیگر کئی مفادات کے حصول میں معاونت ملے گی۔

سب سے زیادہ دیکھی گئی دنیا خبریں
اہم ترین دنیا خبریں
اہم ترین خبریں
خبرنگار افتخاری