کابل میں شیعہ مسجد پر 2 خودکش حملے، 5 افراد شہید اور 12 زخمی

خبر کا کوڈ: 1437796 خدمت: دنیا
حمله انتحاری به شیعیان در کابل

افغانستان کے دارالحکومت کابل میں مسجد الزھرا علیہ السلام پر دو خودکش بمباروں کے حملے کے نتیجے میں 5 افراد ہلاک اور 12 زخمی ہوگئے۔

خبر رساں ادارے تسنیم کے مطابق متعدد خودکش بمباروں نے پولیس کی جانب سے نماز کی جگہ کی طرف جانے سے روکے جانے پر خود کو الزہرا مسجد کے کچن میں دھماکوں سے اڑایا جس کے نتیجے میں 5 افراد شہید اور 12 زخمی ہوگئے۔

کابل میں گزشتہ کچھ عرصے کے دوران دہشت گردی کے کئی حملے ہوچکے ہیں جس پر عوام میں شدید غم و غصہ پایا جاتا ہے اور وہ افغان صدر اشرف غنی کی حکومت کے استعفے کے لیے سراپا احتجاج ہیں۔

افغان وزارت داخلہ کی ترجمان نجیب دانش کا کہنا تھا کہ ’دہشت گرد حملہ مغربی کابل میں الزہرا مسجد میں ہوا جس میںایک پولیس اہلکار سمیت 5 افراد شہید اور 12 زخمی ہوئے۔

ابتدائی طور پر حملے کی ذمہ داری کسی نے قبول کرنے کا دعویٰ نہیں کیا ہے۔

تاہم طالبان ترجمان نے حملے میں ملوث ہونے کی تردید کرتے ہوئے کہا ہے کہ وہ عبادت گاہوں کو نشانہ نہیں بناتے۔

    تازہ ترین خبریں
    خبرنگار افتخاری