گلوبل ٹائمز: ایرانی ڈرون کے گرانے سے تہران-اسلام آباد تعلقات متاثر نہیں ہونگے

خبر کا کوڈ: 1446513 خدمت: ایران
ایران و پاکستان

گلوبل ٹائمز نے ایک رپورٹ میں کہا کہ چین کو توقع ہے کہ ایران اور پاکستان کے درمیان صحت مندانہ اور مستحکم تعلقات قائم رہیں گے کیونکہ دونوں ممالک چین کے دوست ہیں۔

خبر رساں ادارے تسنیم کے مطابق چین نے یقین ظاہر کیا ہے کہ پاکستان اور ایران دوستانہ تعلقات قائم رہیں گے اور خطے میں کشیدگی کے خاتمے اور اپنے عوام کے سماجی و اقتصادی مفادات کو فرو غ دینے کے لئے قریبی شراکت دار کے طور پر کام کریں گے۔

ان خیالات کا اظہار چین کے معروف نیوز نیٹ ورک گلوبل ٹائمز نے ماہرین کی آراء کا حوالہ دیتے ہوئے کیا ہے۔

گلوبل ٹائمز کے مطابق پاکستان ایئر فورس کی طر ف سے مبینہ طور پر ایرانی ڈرون گرائے جانے کا دونوں ملکوں کے تعلقات پر کوئی اثر نہیں پڑے گا۔

ماہرین کا کہنا ہے کہ بھارت، ایران اور پاکستان کے درمیان اس خلا کو وسیع کرنے اور چین پاکستان اقتصادی راہداری میں پاکستان کے کردار کو کم کرنے میں کامیاب نہیں ہو گا۔

یاد رہے کہ گذشتہ منگل کو ایک ایرانی ڈرون جو مبینہ طور پر جاسوسی مشن پر تھا، پاکستانی ایئر فورس نے چین ساختہ جے ایف 17-تھنڈر جنگی طیارے کے ذریعے بلوچستان کے علاقے پنجگور میں مار گرایا۔

ایران میں چین کے سابق سفیر ہوا لی منگ نے گلوبل ٹائمز کو بتایا کہ ڈرون کا گرایا جانا پاک ایران تعلقات میں سرمہری کی علامت نہیں ہے تاہم پاکستان کے سعودی عرب کے ساتھ تعلقات ہیں جو مشرق وسطیٰ میں ایران کا مخالف ہے تاہم اسلام آباد آزاد غیر ملکی پالیسی پر گامزن ہے کیونکہ وہ بہت سے معاملات میں ریاض کی پیروی نہیں کرتا جن میں قطر کے ساتھ تعلقات کا خاتمہ اور یمن میں پاکستان کی مسلح افواج بھیجنا جیسے اہم مسائل شامل ہیں۔

ہوا لنگ نے مزید کہا کہ ایران اور پاکستان ہمسائے ہیں اور ان کے درمیان کوئی اتنے زیادہ مسائل نہیں ہیں تا ہم انڈیا ایران کو یقین دلانے کی کوشش کررہا ہے کہ چین پاکستان اقتصادی راہداری منصوبہ خصوصاً گوادر پورٹ کی تعمیر ایرانی مفادات کو نقصان پہنچائے گی، اس لئے دونوں ممالک کو کچھ فاصلے پر رہنا چاہئے تا ہم ہوا لی منگ نے کہا ہے کہ چین کو توقع ہے کہ ان کے درمیان صحت مندانہ اور مستحکم تعلقات قائم رہیں گے کیونکہ دونوں ممالک چین کے دوست ہیں۔

    تازہ ترین خبریں
    خبرنگار افتخاری