جیکب آباد:سانحہ شب عاشورا کے سہولت کاروں کو رہا کر دیا گیا

خبر کا کوڈ: 1458291 خدمت: اسلامی بیداری
دہشتگرد گرفتار

سانحہ جیکب آباد کے سہولت کاروں کی رہائی پر شیعہ تنظیموں نے 14 جولائی کو احتجاج کا اعلان کر دیا۔

خبر رساں ادارے تسنیم کے مطابق جیکب آباد میں شہداء کے لواحقین اور شیعہ اکابرین کا اجلاس منعقد ہوا جس میں سانحہ شب عاشوراء میں ملوث دہشتگردوں کی رہائی پر شدید غم و غصے کا اظہار کیا گیا۔

اجلاس میں جمعہ 14 جولائی کو احتجاجی جلوس نکال کر دھرنا دیا جائے گا۔

انہوں نے سندھ کے عوام سے اپیل کی کہ وہ احتجاجی تحریک میں شہداء کے لواحقین کا ساتھ دیں۔

اجلاس میں ایم ڈبلیو ایم کے صوبائی سیکرٹری جنرل علامہ مقصود علی ڈومکی، شیعہ قومی اتحاد کے رہنما سید مظہر علی نقوی، مجلس وحدت مسلمین کے رہنما حسن رضا غدیری، نثار احمد ابڑو، لطف علی و دیگر نے خطاب کیا۔

اس جلاس میں ایس پی جیکب آباد سرفراز نواز شیخ کے متعصبانہ اور غیر ذمہ دارانہ رویے کی مذمت کرتے ہوئے شیعہ مدارس، مساجد اور شخصیات کی سیکورٹی واپس لینے پر بھی سخت احتجاج کیا گیا۔

واضح رہے کہ رواں سال سعودی ایماء پر کئی نام نہاد دہشتگردوں کو آزاد کیا گیا ہے جو کسی نہ کسی بڑی تخریبی کارروائی میں ملوث تھے۔

    تازہ ترین خبریں