بیرونی ایجنسیاں افغان جرگے میں پاکستان مخالف کام کر رہی ہیں، قبائلی عمائدین

خبر کا کوڈ: 1463458 خدمت: پاکستان
پاک افغان امریکہ

خیبر ایجنسی کے قبائلی عمائدین کا کہنا ہے کہ نام نہاد جرگے کے ذریعے پاکستان اور افغانستان کے درمیان کشیدگی اور اختلافات پیدا کرنے کی کوشش کی جارہی ہے جس میں پاکستان مخالف بیرونی ایجنسیاں ملوث ہیں۔

خبر رساں ادارے تسنیم کے مطابق خیبرایجنسی سے تعلق رکھنے والے قبائلی عمائدین و مشران ملک وارث خان آفریدی، ملک فیض اللہ جان آفریدی، ملک عبدالرازق آفریدی، ملک صلاح الدین آفریدی، ملک ظاہرشاہ آفریدی، ملک محمدعلی آفریدی،ملک اسماعیل،ملک اصراراللہ آفریدی، ملک نادرشنواری نے دیگر عمائدین کے ہمراہ جمرود پریس کلب میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہاہے کہ افغانستان  میں ہونے والے قبائلی جرگے کے انعقادسے پاکستان اورافغانستان کے درمیان دوریاں پیداکرنے کی کوشش کی جارہی ہے۔
قبائلی عوام کے حکومت پاکستان یاپاکستانی افواج کے ساتھ کوئی اختلافات نہیں، نام نہاد جرگے کے ذریعے پاکستان اورافغانستان کے درمیان کشیدگی اور اختلافات پیداکرنے کی کوشش کی جارہی ہے جس میں پاکستان مخالف بیرونی ایجنسیاں ملوث ہیں۔ افغانستان قبائلی عوام کادوسراگھرہے اورقبائل پاکستان اور افغانستان کے درمیان قیام امن کیلیے اپناکرداراداکرتے رہیں گے۔
عمائدین نے کہاکہ پاکستان اورقبائلی عوام کی افغانستان کے متعلق پالیسی ایک ہے اورہم افغانستان میں امن کے خواہاں ہیں کیونکہ افغانستان میں امن کے بغیر پاکستان میں امن نہیں آسکتا۔ جن نام نہادقبائلی عمائدین نے افغانستان میں ہونیوالے جرگے میں شرکت کی وہ پاکستان اورافغانستان کے درمیان اختلافات پیداکرنے کے بیرونی ایجنڈے پر کار فرما ہیں، عمائدین نے کہاکہ افغانستان اپنی سرزمین پاکستان کیخلاف استعمال نہ ہونے دے جبکہ پاکستان اسی پالیسی پرکاربندہے اوراپنی سرزمین کبھی بھی افغانستان کے خلاف استعمال نہیں ہونے دیگا۔

    تازہ ترین خبریں
    خبرنگار افتخاری