این اے 120 کیلئے ن لیگ کا مریم اور کلثوم نواز کے ناموں پر غور

خبر کا کوڈ: 1486558 خدمت: پاکستان
مریم اور کلثوم نواز

حکمران پارٹی مسلم لیگ ن ایسی حالت میں این اے 120 میں الیکشن لڑنے کیلئے مریم نواز کے نام پر غور کررہی ہے کہ ان کا نام پاناما لیکس میں انے کے بعد ان کی بیرون ملک میں جائیدادوں کے ثبوت بھی سامنے آچکے ہیں۔

خبر رساں ادارے تسنیم کے مطابق برطرف وزیراعظم نواز شریف کی جانب سے لاہور کے حلقہ این اے 120 میں ضمنی الیکشن کے لیے پاکستان مسلم لیگ نواز کے امیدوار کا حتمی فیصلہ ہونا ابھی باقی ہے تاہم پارٹی حکام کا کہنا ہے کہ اس نشست کے ٹکٹ کے لیے سابق خاتونِ اول بیگم کلثوم یا ان کی بیٹی مریم نواز کے ناموں پر بھی غور کیا جارہا ہے۔

ایک پارٹی عہدیدار نے ڈان کو بتایا کہ 'پارٹی اجلاس میں سابق وزیراعظم نواز شریف کی نااہلی کے بعد خالی ہونے والی نشست پر لیگی امیدواروں کے لیے اب تک بیگم کلثوم اور مریم نواز کے نام بالترتیب پہلی اور دوسری ترجیح کے طور پر سامنے آئے ہیں'۔

عہدیدار کا نواز شریف کے حوالے سے کہنا تھا کہ ان کی لاہور آمد کے بعد مشاورتی اجلاس میں امیدوار کا حتمی فیصلہ کیا جائے گا۔

یاد رہے کہ اس سے قبل سابق وزیراعظم نے اپنے چھوٹے بھائی وزیراعلیٰ پنجاب شہباز شریف کو وزیراعظم بنانے کی خواہش ظاہر کی تھی۔

تاہم چند سینئر پارٹی اراکین کی جانب سے اس بات کی نشاندہی کے بعد کہ پنجاب میں شہباز شریف کی عدم موجودگی صوبے میں جاری میگا پراجیکٹس کی رفتار کو متاثر کرے گی، ان کا نام بظاہر واپس لے لیا گیا۔

خیال رہے کہ 1999 میں جنرل (ر) مشرف کی فوجی بغاوت کے بعد قید میں موجود اپنے شوہر کی رہائی کے لیے بیگم کلثوم نے کامیابی سے پارٹی کی تحریک کو آگے بڑھایا تھا تاہم وہ اور ان کی بیٹی مریم آج تک کسی سطح کے انتخابی عمل میں شریک نہیں ہوئی ہیں۔

    تازہ ترین خبریں
    خبرنگار افتخاری