شمالی افغانستان کے شہر "خم آب" پر بھی طالبان کا قبضہ

شمالی افغانستان میں طالبان نے پیشقدمی جاری رکھتے ہوئے "خم آب" نامی شہرپر بھی قبضہ کرلیا ہے۔

طالبان 003

تسنیم خبر رساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق شمالی افغانستان میں حکومت پسپا ہوتی جارہی اور آئے روز کسی نہ کسی علاقے پر طالبان کا قبضہ ہوجاتا ہے۔

شمالی افغانستان کے علاقے جوزجان کے حکام نے گزشتہ دنوں حکومت کو تنبیہ دی تھی کہ اگر وقت پر سیکورٹی فورسز کی مدد نہ کی گئی تو علاقے پر طالبان کا قبضہ ہوسکتا ہے۔

افغان نامہ نگار طاہر قدیری کا کہنا ہے کہ خم آب نامی علاقے پر طالبان نے بغیر کسی مزاحمت کے قبضہ کرلیا ہے۔

طاہر کا کہنا تھا کہ افغان فورسز نے بغیر کسی مزاحمت کے پورے علاقے کو طالبان کے حوالے کردیا۔

دوسری طرف طالبان نے آقچہ نامی شہر پر حملے تیز کردئے ہیں جس کی وجہ سے اس شہر پر بھی بہت جلد طالبان کا قبضہ ہوجائےگا۔

یاد رہے کہ مقامی ذرائع نے اس سے پہلے بھی شمالی افغانستان کے «منگه‌جیک»، «آقچه»، «مردیان»، «درزاب»، «قوش‌تپه»، «فیض‌آباد» و «خانقاه» نامی علاقوں میں طالبان اور سیکورٹی فورسز کے درمیان گھمسان کی لڑائی کی خبر دیتے ہوئے حکومت سے فوری طور پر امداد کی اپیل کی تھی۔

خیال رہے کہ روزانہ کی بنیاد پر طالبان کسی نہ کسی علاقے پر قابض ہو جاتے ہیں جبکہ افغان حکومت تماشائی بنی ہوئی ہے۔

سب سے زیادہ دیکھی گئی دنیا خبریں
اہم ترین دنیا خبریں
اہم ترین خبریں
خبرنگار افتخاری