پاکستان نے امریکہ سے منہ موڑلیا، اب کوئی امریکی بغیر اجازت کے اسلام آباد نہیں آسکتا

خبر کا کوڈ: 1504293 خدمت: پاکستان
پاکستان و آمریکا

امریکی صدر کے حالیہ پاکستان مخالف بیان کے بعد اسلام آباد نے نہایت سخت موقف اپنا کر امریکی نائب وزیرخارجہ کے دورے کو ملتوی کرنے پر واشنگٹن کو مجبور کردیا۔

تسنیم نیوز نے ڈیلی پاکستان کے حوالے سے بتایا ہے کہ امریکی نائب وزیر خارجہ ایلس ویلز کے دورہ پاکستان ملتوی ہونے کا اصل معاملہ سامنے آگیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق حکومت پاکستان نے امریکہ کے ساتھ سفارتی تعلقات پر نظر ثانی کرلی ہے، اب کسی بھی امریکی عہدیدار یا حکومتی شخصیت کو پہلے سے طے شدہ شیڈول کے بغیر پاکستان نہیں آنے دیا جائے گا۔

سفارتی ذرائع کے مطابق حکومت پاکستان نے امریکہ سے سفارتی تعلقات پر نظر ثانی کرتےہوئے امریکی نائب خارکہ کو اسلام آباد آنے سے روک دیا ہے۔

واضح رہے کہ امریکی صدر کے پاکستان مخالف بیان پر ملک بھر میں احتجاجی مظاہرے جاری ہیں عوام کا کہنا ہے کہ حکومت پاکستان امریکہ کے ساتھ تعلقات منقطع کرتے ہوئے نیٹو سپلائی روک دے۔

خیال رہے کہ امریکی نائب وزیر خارجہ کے دورہ پاکستان کو امریکہ نے معمول کا دورہ کہا تھا جس پر پاکستان نے دوٹوک موقف اپناتے ہوئے امریکہ پر واضح کردیا ہےکہ غیر معمولی حالات میں معمول کے دورے کی ضرورت نہیں ہے۔

ذرائع کا مزید کہنا ہے کہ پاکستان نے امریکی حکام پر واضح کردیاہے کہ اب تعلقات معمول کے مطابق نہیں رہے، حالات بدل چکے اور بدلے حالات میں نئی حکمت عملی بنا رہے ہیں، معاملات پرانے اور دوستانہ تعلقات کی بنیاد پر طے نہیں کیے جائیں گے۔

پاکستان نے امریکی حکام پر یہ بھی واضح کردیا ہے کہ آئندہ کوئی بھی امریکی عہدیدار دورہ پاکستان پر آئے تو پہلے سے شیڈول طے کرے ، بغیر اجازت آنے والے کسی امریکی عہدیدار کو خوش آمدید نہیں کیا جائے گا۔

    تازہ ترین خبریں
    خبرنگار افتخاری