کردستان میں ریفرنڈم غیرقانونی اور یک طرفہ عمل ہے، العبادی

خبر کا کوڈ: 1518207 خدمت: دنیا
حیدر العبادی

عراقی وزیراعظم نے کردستان میں ہونے والی ریفرنڈم کو مسترد کرتے ہوئے کہا ہے کہ یہ ایک طرفہ اور غیرقانونی عمل ہے۔

تسنیم نیوز نے الجزیرہ کے حوالے سے بتایا ہے کہ عراقی وزیراعظم حیدر العبادی نے کردستان ریفرنڈم کو غیرقانونی قرار دیتے ہوئے مسترد کردیا ہے۔

واضح  رہے کہ عراقی پارلیمان  نے بھی کردستان میں 25 ستمبر کو خود مختاری کے لیے  ہونے والے ریفرنڈم کی تجویز کو  مسترد کر دیا ہے۔

عراقی پارلیمنٹ کے اراکین نے منگل کے روز کُردستان کی علیحدگی کے حوالے سے ریفرنڈم کرانے کو مسترد کرتے ہوئے اس فیصلے کو غیرقانونی قرار دیا تھا۔

عراقی اراکین پارلیمنٹ نے وزیراعظم العبادی سے مطالبہ کیا کہ بغداد اور کُردستان کے درمیان مسائل کے حل کے لئے سنجیدہ مذاکرات کے لئے اقدامات کریں۔

خیال رہے کہ عراقی علاقے کُردستان کے حکام نے فیصلہ کیا ہے کہ 25 ستمبر کو اس خطے میں ریفرنڈم کا انعقاد کیا جائے۔

عراقی حکومت نے اس سے پہلے اعلان کیا ہے کہ کُردستان میں ریفرنڈم غیرقانونی ہے اور حکومت اس کے نتائج کی پابند نہیں ہوگی۔

    تازہ ترین خبریں
    خبرنگار افتخاری