غیر قانونی شکار کے لیے آئے عرب شہزادوں کی سیکورٹی فورسز پر فائرنگ، 4 شہزادے گرفتار

خبر کا کوڈ: 1589985 خدمت: پاکستان
هوبره 4

پاکستان اور افغانستان کے سرحدی علاقے نوشکی میں غیر قانونی شکار کرنے پر آئے ہوئے عرب شہزادوں نے سیکورٹی فورسز پر فائرنگ کھول دی جس کے نتیجے میں ایک شخص زخمی ہوا جبکہ 4 شہزادوں سمیت 7 افراد کو گرفتار کرلیا گیا۔

خبر رساں ادارے تسنیم نے اے آر وائی نیوز کے حوالے سے بتایا ہے کہ شکار کے دوران فورسز اور ملزمان کے درمیان فائرنگ کا تبادلہ بھی ہوا جس میں ایک شخص معمولی زخمی ہوا تاہم یہ واضح نہیں ہوسکا کہ زخمی ہونے والا ملزمان میں سے تھا یا سیکورٹی فورسز کا کوئی اہلکار۔

30 نومبر کو پاناما کیس میں خط سے شہرت پانے والے قطری شہزادے حماد بن جاسم 13 رکنی وفد کے ساتھ خصوصی طیارے پر لاہور پہنچے تھے۔

قطری وفد نے سابق وزیر اعظم نواز شریف سے بھی ملاقات کی تھی جبکہ ان شہزادوں کا مقصد شکار کرنا بھی تھا۔

تاہم سیکیورٹی فورسز نے بروقت کارروائی کرتے ہوئے شکار کی مہم پر نکلے 4 شہزادوں سمیت 7 افراد کو گرفتار کرلیا۔ گرفتاری اس وقت عمل میں آئی جب شہزادوں کا ٹولہ شکار کی تیاری کر رہا تھا۔

فورسز کے مطابق شکاریوں کے پاس موجود سدھائے ہوئے باز بھی ضبط کرلیے گئے ہیں جو پرندوں خاص طور پر تلور کے شکار کے لیے استعمال کیے جاتے ہیں۔

یاد رہے کہ قطری شہزادوں کی آمد کے بعد اسلام آباد ہائیکورٹ نے انہیں شکار سے روکنے کے لیے دائر درخواست پر وفاق، سیکریٹری خارجہ اور وزیر اعلیٰ پنجاب کو نوٹس جاری کرتے ہوئے 10 دن میں جواب بھی طلب کیا تھا۔

    تازہ ترین خبریں
    خبرنگار افتخاری