ایرانی پارلیمنٹ اسپیکر کی تہران اسلام آباد سیکورٹی تعاون بڑھانے پر تاکید

ایرانی پارلیمنٹ اسپیکر نے تہران اور اسلام آبادکے مشترکہ دشمنوں کی ریشہ دوانیوں کی جانب اشارہ کرتے ہوئے دونوں ملکوں کے درمیان تعلقات کو مضبوط اور پائیدار بنانے کی ضرورت پر زور دیا ہے۔

ایرانی پارلیمنٹ اسپیکر کی تہران اسلام آباد سیکورٹی تعاون بڑھانے پر تاکید

خبر رساں ادارے تسنیم کے مطابق بدھ کے روز تہران میں اسلامی ملکوں کے بین الپارلیمانی اجلاس کے موقع پر پاکستانی سینیٹ کے چیئرمین رضا ربانی سے بات چیت کرتے ہوئے ڈاکٹر علی لاریجانی کا کہنا تھا کہ امریکہ خطے کا امن و سکون برباد کرنا چاہتا ہے اور دہشت گردی کو فروغ دے رہا ہے لہذا ایران اور پاکستان کو باہمی تعلقات کو پہلے سے زیادہ مضبوط اور پائیدار بنانا چاہیے۔
انہوں نے کہا کہ ایران اور پاکستان کے تعلقات کی سطح میں اضافہ اس بات کی نشاندہی کرتا ہے کہ دونوں ممالک صحیح سمت میں حرکت کر رہے ہیں۔

ڈاکٹر علی لاریجانی نے دونوں ملکوں کے درمیان اقتصادی تعلقات کے فروغ میں حائل رکاوٹوں کو دور کیے جانے کی ضرورت پر بھی زور دیا۔

ایران کے پارلیمانی اسپیکر کا کہنا تھا کہ دوطرفہ بات چیت کے ذریعے بہت سی مشکلات پر قابو پایا جا سکتا ہے اور اس کے لیے  ایران وپاکستان کے درمیان سیکورٹی تعاون کا فروغ بھی ضروری ہے۔

پاکستانی سینیٹ کے چیئرمین رضا ربانی نے بھی اس موقع پر کہا کہ امریکہ خطے میں اپنی ناکامیوں کا الزام پاکستان کے سر ڈالنے کی کوشش کر رہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان نے امریکی سفارت خانے کی بیت المقدس منتقلی کی مذمت میں اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی میں ووٹ دیا ہے اور اسی وجہ سے امریکہ نے پاکستان کی فوج اور مالی امداد روک لی ہے۔

پاکستان سینیٹ کے چیئرمین کا کہنا تھا کہ ان کا ملک، اسلامی جمہوریہ ایران کے ساتھ بینکاری تعلقات میں حائل رکاوٹوں کو دور  کرنے کی کوشش کر رہا ہے۔

قابل ذکر ہے کہ او آئی سی کے رکن ملکوں کی تیرہویں پارلیمانی کانفرنس منگل سے تہران میں شروع ہوئی ہے اور بدھ تک جاری رہے گی۔

سب سے زیادہ دیکھی گئی ایران خبریں
اہم ترین ایران خبریں
اہم ترین خبریں
خبرنگار افتخاری