امریکی سفارتخانہ مئی کے مہینے میں قدس منتقل کرنے کا اعلان

امریکی حکام کا کہنا ہے کہ ان کا سفارت خانہ مقبوضہ بیت المقدس میں رواں سال مئی کے مہینے میں اسرائیل کے یومِ تاسیس کے موقع پر کھول دیا جائے گا۔

امریکی سفارتخانہ مئی کے مہینے میں قدس منتقل کرنے کا اعلان

تسنیم خبررساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق، امریکی حکام نے عالم اسلام کے شدید رد عمل کو نظر انداز کرتے ہوئے اپنا سفارتخانہ رواں سال مئی میں بیت المقدس منتقل کرنے کا اعلان کیا ہے۔

فرانسیسی خبررساں ادارے کے مطابق امریکی وزیرخارجہ ریکس ٹیلرسن نے اسرائیل میں امریکی سفارت خانے کی تل ابیب سے القدس منتقلی کے منصوبے پر دستخط کردیے ہیں۔

رپورٹ کے مطابق اس سیکورٹی پلان کو خفیہ رکھا گیا ہے اور حکام کو اس پر عوامی سطح پر بحث کرنے سے منع کیا گیا ہے۔

امریکی ذرائع ابلاغ کا کہنا ہے کہ سفارت خانے کی افتتاحی تقریب رواں سال 14 مئی کو اسرائیل کے 70ویں یومِ تاسیس کے موقع پر ہوگی اور اس دن کا انتخاب اسرائیل کی آزادی کے اعزاز میں کیا گیا ہے۔

ابتدائی طور پر سفارت خانے کی منتقلی علامتی ہوگی اور بتدریج اس عمل کو مکمل کیا جائے گا۔ آغاز میں نئے سفارت خانے کا عملہ چند افراد پر مشتمل ہوگا جب کہ تل ابیب میں واقع سفارت خانہ بھی معمول کے مطابق فعال رہے گا۔

واضح رہے کہ امریکی صدر ٹرمپ کی جانب سے بیت المقدس کو اسرائیلی دارالحکومت قرار دینے کے خلاف پاکستان اور ایران سمیت دنیا کے مختلف ممالک میں امریکہ اور اسرائیل کے خلاف سخت مظاہرے کئے تھے۔

سب سے زیادہ دیکھی گئی اسلامی بیداری خبریں
اہم ترین اسلامی بیداری خبریں
اہم ترین خبریں
خبرنگار افتخاری