کابل حملے میں شہید ہونے والوں کی تعدادمیں اضافہ ، حملہ ہم نے نہیں کیا طالبان

افغانستان کے دارالحکومت کابل میں ووٹر رجسٹریشن مرکز کے باہر ہونے والے دھماکے میں شہید ہونے والوں کی تعداد میں اضافہ ہو گیا ہے

کابل حملے میں شہید ہونے والوں کی تعدادمیں اضافہ ، حملہ ہم نے نہیں کیا طالبان

تسنیم نیوز کے مطابق دھماکہ اتوار کی صبح اس وقت ہوا جب مغربی کابل کے شیعہ آبادی والے علاقے میں قائم ووٹر رجسٹریشن آفس کے باہر لوگوں کی لمبی لمبی قطاریں لگئی ہوئی تھیں۔

سرکاری سطح پر 31 افراد کے مارے جانے کی تصدیق کی گئی ہے تاہم مقامی ذرائع ابلاغ کا کہنا ہے کہ دھماکے میں کم سے کم 48افراد شہید اور 65 کے قریب زخمی ہوئے ہیں۔

 بعض خبروں میں زخمیوں کی تعداد سو سے بھی زائد بتائی گئی ہے۔ شہید اور زخمی ہونے والوں میں خواتین اور بچے بھی شامل ہیں۔

تاحال دھماکے کی نوعیت کے بارے میں پولیس نے کچھ نہیں بتایا کہ یہ دھماکہ بم کے ذریعے کیا گیا یا خودکش حملہ تھا۔

دہشت گرد گروہ داعش کو کابل کے شیعہ آبادی والے علاقے دشت برچی میں قائم ووٹر اندراج کے مرکز پر حملے کا ذمہ دار قرار دیا گیا ہے۔

طالبان کے ترجمان نے شیعہ آبادی پر ہونے والے حملے سے لاتعلقی کا اظہار کیا ہے۔

سب سے زیادہ دیکھی گئی دنیا خبریں
اہم ترین دنیا خبریں
اہم ترین خبریں
خبرنگار افتخاری