یمن میں اسکول بس پر حملہ غلطی سے کیا گیا، سعودی اتحاد کا اعتراف

سعودی اتحاد نے گزشتہ ماہ یمن میں بچوں کی بس پر حملے کی غلطی کا اعتراف کرلیا۔

یمن میں اسکول بس پر حملہ غلطی سے کیا گیا، سعودی اتحاد کا اعتراف

خبررساں تسنیم ادارے کی رپورٹ کے مطابق، گزشتہ ماہ سعودی اتحاد کے شمالی یمن کے علاقے صعدہ میں بچوں سے بھری ایک بس پر فضائی حملے کے نتیجے میں کم از کم 40 بچوں سمیت 51 افراد جاں بحق اور 79 زخمی ہوئے تھے۔

اس حوالے سے ریڈ کراس نے اپنی ٹوئٹ میں بتایا تھا کہ ان کی جانب سے چلائے جانے والے ایک اسپتال میں 29 بچوں کی لاشیں لائیں گئیں جن کی عمریں 15 سال سے کم ہیں جب کہ واقعے میں 48 دیگر افراد زخمی بھی ہوئے جن میں 30 بچے تھے_

سعودی اتحاد نے یمن میں گزشتہ ماہ بس پر حملے کی غلطی تسلیم کرلی ہے جب کہ ترجمان سعودی اتحاد کہنا ہے کہ حملے میں ہونی والی اموات پر بے حد افسوس ہے۔

سعودی عرب اتحاد کی جانب سے کی جانے والی تحقیقات میں اس بات کا اعتراف کیا گیا ہے کہ 9 اگست کو صوبہ صعدہ میں کیے جانے والے فضائی حملے میں کچھ غلطیاں ہوئیں۔

یاد رہے کہ اس حملے کے بعد سعودی اتحاد کا کہنا تھا کہ کارروائی سعودی شہر جازان پر بیلسٹک میزائل حملے کے ذمہ داروں کے خلاف کی گئی۔

مربوط خبریں
سب سے زیادہ دیکھی گئی مشرق وسطی خبریں
اہم ترین مشرق وسطی خبریں
اہم ترین خبریں