جمال خشوگی کی لاش کو پہلے تیزاب سے جلایا ، پھر نالی میں پھینک دیا، ترکی کے انگریزی روزنامہ ”ڈیلی صباح“

'ڈیلی صباح ' نے ذرائع کے حوالے سے سنیچر کو ایک رپورٹ شائع کی ہے۔ جس میں دعوی کیا گیا ہے کہ خشوگی کا قتل کیا گیا پھر ان کی لاش کواستنبول میں سعودی سفارت خانہ کے پاس تیزاب سے جلایا گیا اور نالی میں بہا دیا گیا ، تاکہ ثبوت مٹ جائے_

جمال خشوگی کی لاش کو پہلے تیزاب سے جلایا ، پھر نالی میں پھینک دیا، ترکی کے انگریزی روزنامہ ”ڈیلی صباح“

تسنیم خبررساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق، خشوگی کا قتل کرنے کے بعد قاتلوں نے لاش کو تیزاب سے جلا دیا تھا اور پھر نالی میں پھینک دیا تھا۔

استنبول میں سعودی سفات خانہ کے پاس ایکی نالی سے لئے گئے سیمپلوں پر تیزاب کے تھکے ملے ہیں۔ جس کی بنیاد پر اخبار نے یہ دعوی کیا ہے۔ جس میں دعوی کیا گیا ہے کہ خشوگی کا قتل کیا گیا پھر ان کی لاش کو استنبول میں سعودی سفارت خانہ کے پاس تیزاب سے جلایا گیا اور نالی میں بہا دیا گیا ، تاکہ ثبوت مٹ جائے_

واضح رہے کہ 2 اکتوبر کو خشوگی استنبوک سفارت خانے سے غائب ہو گئے۔ انہیں آخری مرتبہ سفارت خانے میں داخل کرتے دیکھا گیا تھا۔ وہاں وہ اپنی شادی کیلئے کچھ ڈاکیومینٹس لینے گئے تھے۔ ابھی تک پولیس کو ان کی لاش نہیں مل پائی ہے_

مربوط خبریں
سب سے زیادہ دیکھی گئی اسلامی بیداری خبریں
اہم ترین اسلامی بیداری خبریں
اہم ترین خبریں
خبرنگار افتخاری