اسرائیل کو تسلیم کرنا اُمت مسلمہ کی پیٹھ میں چھرا گھونپنے کے مترادف ہے ،علامہ ساجد نقوی

شیعہ علماء کونسل کے سربراہ علامہ ساجد نقوی کا کہنا ہے کہ اسرائیل کو تسلیم کرنا اُمت مسلمہ کی پیٹھ میں چھرا گھونپنے کے مترادف ہے، جو لوگ اسرائیل کو تسلیم کرنے کا سوچ رہے ہیں ان کو اپنی سوچ میں تبدیلی لانے کی ضرورت ہے اس لئے کہ یہود و نصاریٰ اُمت مسلمہ کے کبھی دوست نہیں بن سکتے۔

اسرائیل کو تسلیم کرنا اُمت مسلمہ کی پیٹھ میں چھرا گھونپنے کے مترادف ہے ،علامہ ساجد نقوی

تسنیم خبررساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق، شیعہ علما کونسل کے سربراہ علامہ سید ساجد علی نقوی نے غزہ پٹی فلسطین پر اسرائیلی فورسز کی جانب سے فائرنگ اور مزائلوں سے حملہ کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے کہا کہ غزہ پراسرائیلی جارحیت وسفاکیت اُمت مسلمہ کےلئے لمحہ فکریہ ہے۔

علامہ ساجد نقوی کا مزید کہناتھا کہ غزہ پٹی پر معصوم بچوں اور شہریوں پر اسرائیلی فورسز کی فائرنگ اور مزائلوں سے حملے بین الاقوامی قوانین کی کھلم کھلا خلاف ورزی ہے جس پر اقوام عالم کی خاموشی حیران کن اور اس موقع پر انسانی حقوق کی علمبردار تنظیموں کی آنکھیں بند اور زبانیں کیوں گنگ ہو جاتی ہیں؟

انہوں نے کہا کہ مارچ سے اب تک اسرائیلی فورسز کے ہاتھوں 200 فلسطینی شہید کئے جا چکے ہیں جن میں بچے، خواتین، جوان اور بوڑھے بھی شامل ہیں۔

علامہ ساجد نقوی نے مزید کہاکہ اقوام متحدہ، او آئی سی اور انسانی حقوق کی عالمی تنظیمیں فلسطین کا مسئلہ حل کرنے کےلئے اپنا مثبت کردار ادا کریں، اور ہم فلسطینی بھائیوں کی اخلاقی و سیاسی حمایت جاری رکھیں گے۔

انہوں نے کہا کہ خطہ کا پائیدار امن بھی مسئلہ فلسطین سے جڑ ا ہوا ہے۔

علامہ ساجد نقوی نےحکومت پاکستان پر بھی زور دیاکہ وہ مسئلہ فلسطین کے حل کےلئے بھرپور اور موثر کردار ادا کرتے ہوئے فلسطینی بھائیوں پر ظلم اور اسرائیلی سفاکیت و جارحیت کوروکنے میں کلیدی کر دار ادا کرے۔

سب سے زیادہ دیکھی گئی پاکستان خبریں
اہم ترین پاکستان خبریں
اہم ترین خبریں
خبرنگار افتخاری