سندھ حکومت کو 6 ہفتوں میں نئے پولیس قوانین بنانے کا حکم

سندھ ہائیکورٹ نے صوبائی حکومت کو 6 ہفتوں کے اندر نئے پولیس قوانین بنانے کا حکم دے دیا۔

سندھ حکومت کو 6 ہفتوں میں نئے پولیس قوانین بنانے کا حکم

تسنیم خبررساں ادارے کے مطابق، سندھ ہائیکورٹ میں چیف سیکریٹری، آئی جی سندھ اور دیگر کے خلاف توہین عدالت کی درخواست پر سماعت ہوئی۔

سماعت کے آغاز پر درخواست گزار کے وکیل فیصل صدیقی نے کہا کہ سندھ ہائیکورٹ نے ستمبر 2017 میں پولیس رولز میں ترمیم کا حکم دیا تھا، ڈیڑھ سال میں حکومت سے پولیس قوانین نہیں بن رہے تو حکومت کو ہی ختم ہونا چاہیے۔

درخواست گزار نے مزید کہا کہ وزیراعلیٰ سید مراد علی شاہ کے خلاف توہین عدالت کی 2 درخواستیں بھی دائر ہیں اور ڈیڑھ سال گزر گیا، توہین عدالت کی درخواست پرجواب نہیں دیا گیا۔

ایڈووکیٹ جنرل سندھ سلمان طلب الدین نے عدالت کو بتایا کہ محکمہ پولیس کے لیے نئے قوانین بنا کر کابینہ کو بھیج دیے گئے ہیں، پولیس کے لیے نئے قوانین کی منظوری کے لیے ہمیں مزید 6 ہفتوں کی مہلت دی جائے۔

عدالت نے صوبائی حکومت کو 6 ہفتوں کی مہلت دیتے ہوئے سندھ حکومت کو نئے پولیس قوانین بنانے کا حکم دے دیا۔

سب سے زیادہ دیکھی گئی پاکستان خبریں
اہم ترین پاکستان خبریں
اہم ترین خبریں