ناسا نے پاکستانی طالبہ رادیہ عامر کو انٹرن شپ کیلئے منتخب کرلیا

امریکی خلائی ادارے ناسا نے کراچی کی 12 سالہ طالبہ رادیہ عامر کو ایک ہفتے کی انٹرن شپ کے لیے منتخب کرلیا۔

ناسا نے پاکستانی طالبہ رادیہ عامر کو انٹرن شپ کیلئے منتخب کرلیا

تسنیم خبررساں ادارے کے مطابق، پاکستان میں امریکی سفارتخانے کے فیس بک پیج پر جاری تفصیلات کے مطابق کراچی کے برٹش اوور سیز اسکول کی آٹھویں کلاس کی طالبہ رادیہ عامر کو ناسا کے انٹرن شپ پروگرام کے لیے منتخب کیا گیا ہے، ایک ہفتے پر مشتمل انٹرن شپ میں اسٹروناٹ ٹریننگ ایکسپرینس کی تربیت بھی شامل ہوگی۔

رادیہ ہفتہ کو کراچی سے فلوریڈا کے کینیڈی سپیس سینٹر کے لیے اپنا سفر شروع کریں گی، وہ  ناسا میں تربیت کے دوران ورچول اور موشن سیمیولیشن کے ذریعے مریخ پر چہل قدمی اور ڈرائیو بھی کریں گی جبکہ وہ اپنی ٹریننگ میں مائیکرو گریوٹی کی بدولت سپیس واک بھی کرسکیں گی۔

مقامی ذرائع کے مطابق  پاکستانی نژاد حبا رحمانی کینیڈی اسپیس سینٹر کے ایکسپیڈیبل لانچ وہیکل ( ای ایل وی) کا ایک اہم حصہ ہیں جو 'پیگاسس' اور 'فیلکن نائن' پر کام کرتی رہی ہیں، حبا، ناسا کے لانچ سروسز پروگرام (ایل اپی ایس) سے بھی منسلک ہیں اور کینیڈی سپیس سینٹر سے مختلف راکٹ لانچنگ پروسیس کی ٹیلیمیٹری لیبارٹری میں نگرانی کرتی ہیں۔

اس کے علاوہ پاکستانی انجینئر اور سائنسدان منصور احمد گذشتہ 35 سال سے ناسا میں مختلف عہدوں پرخدمات سر انجام دیتے رہے ہیں۔

وہ اس وقت ڈائریکٹر ایسٹرو فزکس پراجیکٹ ڈویژن کے علاوہ فزکس آف کاسموس اینڈ کوسمک اوریجن پروگرام، گوڈارڈ  سپیس فلائٹ سینٹر، میری لینڈ کے پروگرام مینیجر بھی ہیں۔منصور احمد نے اپنے کیریئر کا بیشتر حصہ 'ہبل ٹیلی اسکوپ پروگرام' میں مختلف عہدوں پر کام کرتے ہوئے گزارا ہے، جس میں فلائٹ آپریشن مینیجر اور پراجیکٹ مینیجر کے عہدے قابل ذکر ہیں۔

سب سے زیادہ دیکھی گئی پاکستان خبریں
اہم ترین پاکستان خبریں
اہم ترین خبریں
خبرنگار افتخاری