بحرین؛ آل یہود، آل سعود اور آل خلیفہ کے خلاف مظاہرے


بحرین؛ آل یہود، آل سعود اور آل خلیفہ کے خلاف مظاہرے

بحرینی دارالحکومت منامہ میں اسرائیلی وفد کی آمد کی مذمت میں مظاہرے کئے گئے ہیں۔

تسنیم خبررساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق، گزشتہ شب بحرین بھرکے مختلف شہروں میں اسرائیلی وفد کے بحرین آمد کے خلاف مظاہرے کئے گئے۔

مظاہرین آل یہود، آل سعود اور آل خلیفہ کے خلاف نعرے بارزی کررہے تھے۔

بحرینی شہریوں نے اسرائیل  کے ساتھ تعلقات فوری ختم کرنے کا مطالبہ کررہے تھے، مظاہرین کا کہنا تھا کہ آل خلیفہ نے آل سعود کی خشنودی کے لئے فلسطینوں کے ساتھ غداری کی ہے۔

واضح رہے کہ سیکورٹی فورسز کے ہائی الرٹ کے باوجود اس ملک کے مختلف علاقوں میں مظاہرے جاری ہیں۔

 

بحرینی شہریوں نے بحرین  اور اسرائیل کے مابین معاہدے کی شدید مخالفت و مذمت کرتے ہوئے بیت المقدس اور فلسطین سے تجدید عہد کیا۔

مظاہرین نے فلسطین کے جھنڈے اور مسجد الاقصیٰ کی تصویریں اٹھا رکھی تھیں۔

انہوں نے ہاتھوں میں پلے کارڈز اٹھا رکھے تھے جن پر لکھا ہوا تھا: "اسرائیل سے تعلقات نامنظور نامنظور"۔ وہ "مردہ باد اسرائیل" کے نعرے بھی لگا رہے تھے۔

یاد رہے کہ  بحرین میں یہ مظاہرے بحرین کے شہروں منامه، سماهیج، باربار، السهله جنوبی، ابوصیبع، الشاخوره، ستره سفاله، سنابس، صدد، کرباباد اور کرانه وغیرہ تک پھیل گئے ہیں۔

سب سے زیادہ دیکھی گئی دنیا خبریں
اہم ترین دنیا خبریں
اہم ترین خبریں
خبرنگار افتخاری