مقالات کی شہ سرخیاں
صادقہ خان

تحریر: صادقہ خان

کسے وکیل کریں کس سے منصفی چاہیں؟

مان لیجیئے! کہ ہماری حکومتیں نا اہل، اعلیٰ عدالتیں بکاؤ اور سیاسی کرتا دھرتا جانوروں سے بدتر تو ہیں ہی، ہم خود ایک "کرپٹ قوم" ہیں۔ ہمارے ضمیر مردہ اور ہاتھ پاؤں ہیں ہی نہیں، کبھی مشرف، کبھی عمران اور کبھی راحیل شریف کی صورت میں اپنا وہ نجات دہندہ تلاشتے رہتے ہیں جو آئیگا اور جادو کی چھڑی سے سب کچھ ٹھیک کردیگا۔

پانامہ کیس

تحریر: احمد طوری

پانامہ کیس فیصلے کا پوسٹ مارٹم! اور سیاسی ہلچل

پاکستان سپریم کورٹ کا پانامہ کیس پر صدیوں تک یاد رکھنے والا فیصلہ بالآخر آ گیا ہے اور نہیں بھی۔ سپریم کورٹ نے اپنے  فیصلے میں وزیر اعظم نواز شریف کے خلاف پاناما کیس کی مزید تحقیقات کے لیے فیڈرل انویسٹی گیشن ایجنسی (ایف آئی اے) کے اعلیٰ افسر کی سربراہی میں مشترکہ تحقیقاتی ٹیم (جے آئی ٹی) بنانے کا حکم دے دیا، جسے حکمران جماعت مسلم لیگ (ن) نے 'فتح' قرار دیا۔

آل سعود

تحریر: عبدالرحمٰن خان

آل سعود کا اپنے انتہا پسندانہ چہرے کے داغ دھونے کا ایک منصوبہ۔۔۔

ایک بار پھر ایک دل دہلا دینے والی خبر پاکستانی میڈیا میں صف اول کے ایشو کے طور پر گردش کر رہی ہے اور ساتھ ہی اپنے دامن میں بہت سے مطالبِ پنہاں سموے مختلف زاویہ ہاے نظر اس بات کی غمازی کر رہے ہیں کہ شاید یہ پاکستان میں آل سعود کی اپنے انتہا پسندی کے ٹائٹل سے چھٹکارہ پانے کا ایک پراجیکٹ ہے۔

انتہا پسندی

تحریر: مدثر مہدی

پاکستانی معاشرہ اور انتہا پسندی

پاکستانی معاشرے میں انتہا پسندی کا کافی اثر ورسوخ رہا ہے اور یہ کافی جگہ اپنی مختلف شکلوں میں ظہور کرتا رہتا ہے، یہ اثر آپ کو مدرسوں میں بھی نظر آئے گا اور جامعات میں بھی، یہ آپ کو پوش علاقوں کے بنگلوں میں بھی نظر آے گا اور کچی آبادیوں کی جھونپڑیوں میں بھی، یہ سیاست دانوں اور کھلاڑیوں میں بھی نظر آئے گا، الغرض ہر شعبے میں کسی ناکسی شکل میں موجود ہے اور اکثر اپنا مکروہ چہرہ عیاں کرتا رہتا ہے۔

عزیر بلوچ

تحریر: عبدالرحمٰن خان

پاک ایران تعلقات کے مخالف عناصر ایک بار پھر سرگرم/ ایرانی حکام اور میڈیا اس گھناؤنی سازش کا حصہ نہیں بنیں گے

پاکستانی کالم نگار کا کہنا ہے کہ بدخواہوں کو خوش کرنے کے چکر میں پاکستان کہیں دوستوں سے ہاتھ نہ دھو بیٹھے کیونکہ پاک ایران تعلقات کے مخالف عناصر ایک بار پھر سرگرم ہوگئے ہیں تاہم ایرانی حکام اور میڈیا اس گھناؤنی سازش سے آگاہی کی وجہ سے اس ناپاک کھیل کا حصہ نہیں بنیں گے۔

پاکستانی میڈیا

تحریر: سلمان اختر

عزیر بلوچ اور پاکستان میں ایران مخالف پروپیگنڈا

اسلامیہ جمہوریہ پاکستان جب 14 اگست 1947 کو دنیا کے نقشے پر نمودار ہوا تو ایران دنیا کا پہلا ملک تھا جنہوں نے پاکستان کو تسلیم کیا۔ اور جب 1965 میں پاک۔بھارت جنگ میں پاکستان کی سالمیت خطرے سے دوچار ہوئی تو ایران پہلا ملک تھا جس نے پاکستان کی نہ صرف بھرپور مدد کی بلکہ پاکستان کے جہازوں کو ایران کے ائیرپورٹ استعمال کرنے کی کھلی اجازت دی گئی۔

ایران و پاکستان

اس مرتبہ عزیر بلوچ کے انکشافات؛

پاکستانی میڈیا میں ایران مخالف لابی کی کاوشوں کا تسلسل/ پاکستان: افغانستان سفارتی مسائل کو میڈیا میں کیوں گھسیٹتا ہے؟

ماہرین کا عزیر بلوچ کے مبینہ ایران مخالف انکشافات پر مبنی پاکستانی میڈیا کی خبروں پر تنقید اور اس کی تردید کرتے ہوئے کہنا ہے کہ اس قسم کی خبریں پاک ایران کے برادرانہ تعلقات میں رخنہ ڈالنے کیلئے ایک خاص سازش کے تحت نشر کی جارہی ہیں۔

پاراچنار

تحریر: فرحت حسین مہدوی

پاراچنار پر بزدلانہ حملوں کا تسلسل (دوسری قسط)

پاراچنار کیخلاف ہونے والی سازش کے تحت جعلی ڈومیسائل اور شناختی کارڈ کی فیکٹریاں لگاکر ہزاروں افغان باشندوں کو پاکستان کی شہریت دیتے ہوئے قانون کی دھجیاں اڑائی گئیں اور شیعہ قوم نے تہذیب یافتہ قوم کی حیثیت سے تمام مسائل قانونی راستوں سے حل کرنے کی بھرپور کوشش کی لیکن اٹل ریاستی فیصلہ ٹل نہ سکا۔

فرمانده ارتش سوریه الشعیرات

تحریر: سید دلاور جعفری

شام پر امریکی جارحیت؛ دہشت گردوں کے پشتیبان کھل کر سامنے آگئے/ اقوام عالم کے موقف

الشعیرات ایئربیس پر امریکی حملے کے فوری بعد سب سے پہلے اسرائیل اور سعودی عرب نے اس کی حمایت کی جس سے یہ ظاہر ہوگیا ہے کہ یہ دونوں ممالک دنیائے اسلام کے خلاف تمام ترسازشوں کا حصہ ہیں اور انہی کی مد د سے ہر سو تباہی و بربادی ہورہی ہے۔

مولا علی

مولائے کائینات علیہ السلام کے یوم ظہور پرنور کی مناسبت سے؛

جس جس کا میں مولا، اس اس کا یہ علی (علیہ السلام) مولا: الحدیث

جب پیغمبر اسلام صلی علیہ و آلہ وسلم نے آپ کا نام اللہ کے نام پر علی رکھا تو حضرت ابو طالب و فاطمہ بنت اسد علیہ السلام نے پیغمبر اسلام صلی علیہ و آلہ وسلم سے عرض کیا کہ ہم نے ہاتف غیبی سے یہی نام سنا تھا۔

الشعیرات

تحریر: محمد سلیم

شام پر حملہ کیوں؟ فائدہ کس کو ہوا؟ اورمشرق وسطیٰ کا مستقبل؟

 کسی خود مختار ملک پر امریکہ کا یکطرفہ حملہ پہلی بار نہیں بلکہ ویتنام سے لیکر افغانستان، عراق اور لیبیا پر پہلے بھی حملے کرچکا ہے اور جہاں بھی امریکہ گیا ہے وہاں دہشتگردوں کا راج ہے اور وہ ملک ابھی تک تباہ و برباد ہیں۔

امام تقی علیہ السلام

امام تقی علیہ السلام کے یوم ولادت کی مناسبت سے؛

خدا پر توکل ہر گرانقدر چیز کی قیمت اور بلندی کی طرف پہنچنے کی سیڑھی ہے

امامت کے نویں تاجدار، فرزند رسول صلی علیہ وآلہ وسلم، امام محمد تقی علیہ السلام بتاریخ 10 رجب المرجب 195ھ یوم جمعہ بمقام مدینہ منورہ دنیا میں تشریف لائے۔

پاراچنار

تحریر: فرحت حسین مہدوی

پاراچنار پر بزدلانہ حملوں کا تسلسل (پہلی قسط)

قائد اعظم والے پاکستان کو خیر باد کہنے والے ضیاء الحق والے پاکستان نے افغانستان کی خانہ جنگی میں مداخلت کی تو مرکزی حکومت کو یہ بھولا ہوا علاقہ یاد آیا جو پاکستان کے کسی بھی علاقے سے زیادہ کابل سے قریب تھا چنانچہ میرے علاقے سے افغانستان میں مداخلت کے لئے اس وقت بھی خوب خوب فائدہ اٹھایا گیا۔

پاراچنار

تحریر: شفیق طوری

کرم ایجسنی، پاراچنار کو کیسے پُرامن بنائیں؟

ایکیسویں صدی میں لڑنے کے انداز بدل گئے ہیں اس لئے ہم نے بھی طریقہ کار بدلا ہے۔ جو لوگ اپنے آپ کو وقت کیساتھ نہیں بدلنا چاہتے وہ تاریخ کا حصہ بن جاتے اور جو وقت کے تغیر و تبدل کیساتھ اپنے آپ کو ڈھلنے کی کوشش کرتے ہیں وہ زندہ رہتے ہیں اور ہمیشہ زندہ رہیں گے۔

راحیل شریف

بقلم: فرحت حسین مہدوی

سعودی الائنس میں پاکستان کی شمولیت کا فائدہ کس کو ملے گا

ہم نے اس قبل تین مضامین کے ضمن میں جو کچھ عرض کیا تھا وہ آخرکار سچ ثابت ہوا اور مختلف قسم کی تردیدوں اور توجیہوں کے باوجود ہوا وہی جس کا فیصلہ "پاک سعودی" مشترکہ تزویر کے مطابق پہلے ہی ہوچکا تھا۔

اہم ترین خبریں