اہم ترین مقالات خبریں
پاکستان میں ماحولیاتی تبدیلی کا ذمہ دار ادارہ تحفظ ماحولیات ہے؟

پاکستان میں ماحولیاتی تبدیلی کا ذمہ دار ادارہ تحفظ ماحولیات ہے؟

ہمارے ہاں ہمیشہ سے یہ روایت قائم رہی ہے کہ کبھی ذمہ دار کا تعین نہیں کیا جاتا اور اگر کوئی حقائق کی روشنی میں ذمہ دار کا تعن کرنے کی جسارت کر ہی لے تو نہ تو ذمہ دار کا احتساب کیا جاتا ہے اور نہ ہی کوئی کاروائی عمل میں لائی جاتی ہے۔

ملا فضل اللہ کی موت پر بھارت میں کھلبلی

ملا فضل اللہ کی موت پر بھارت میں کھلبلی

ملا فضل اللہ کو پاکستان کا اسامہ بن لادن کہا جائے تو غلط نہ ہوگا مگر یہ حیرت کی بات ہے کہ 13جون کو اس کی افغانستان کے کنڑ صوبے میں ایک ڈرون حملے میں ہلاکت کی امریکی اور افغان حکومت کی طرف سے ریلیز کی گئی اطلاعات کے باوجود پاکستان میں سیاسی، عسکری اور میڈیا کی جانب سے کسی طرح کا کوئی خاص ردعمل دیکھنے میں نہیں آرہا۔

ﺑﻘﯿﻊ ﺍﻭﺭ ﻗﺪﺱ ﭘﺮ ﺳﯿﺎﺳﺖ کیوں؟

ﺑﻘﯿﻊ ﺍﻭﺭ ﻗﺪﺱ ﭘﺮ ﺳﯿﺎﺳﺖ کیوں؟

ﮨﻢ ﻣﯿﮟ ﺳﮯ ﺑﻌﺾ ﮐﺞ ﻓﮑﺮ ﻟﻮﮒ ﺟﺲ ﺑﻘﯿﻊ ﮐﻮ ﻗﺪﺱ ﺳﮯ ﻣﺘﺼﺎﺩﻡ ﮐﺮﻧﮯ ﮐﮯ ﺩﺭ ﭘﮯ ﮨﯿﮟ، ان کو یہ جان لینا چاہئے کہ ﺍﺱ ﻗﺒﺮﺳﺘﺎﻥ ﻣﯿﮟ ﺳﻮﻧﮯ ﻭﺍﻻ ﺍہلبیت ﺍﻃہار علیہم السلام ﺳﮯ متعلق ﺍﯾﮏ ﺍﯾﮏ ﻓﺮﺩ ﺩﻧﯿﺎ ﮐﮯ مظلوموں ﺍﻭﺭ ﻧﺎﺩﺍﺭﻭﮞ ﮐﯽ ﭘﻨﺎﮦ ﮔﺎﮦ تھا۔

الحدیدہ ۔۔۔ اب میڈیا خاموش کیوں ہے !؟

الحدیدہ ۔۔۔ اب میڈیا خاموش کیوں ہے !؟

ممالک کو کھنڈرات بنانے کا سلسلہ جاری ہے اور اس وقت امریکی ایماء پر سعودی عرب کی سربراہی میں قائم "عرب اتحاد" نے یمنیوں کو مفلوج کرنے کی غرض سے اس ملک کی مرکزی بندرگاہ الحدیدہ پر دھاوا بول رکھا ہے ایک ایسی بندرگاہ جو یمن کی ستر فی صد درآمدات کا واحد ذریعہ ہے۔

یمن کی شہ رگ ۔ الحدیدہ سقوط کرگیا تو ...

یمن کی شہ رگ ۔ الحدیدہ سقوط کرگیا تو ...

یہ الحدیدہ پر حملے سے پانچ دن پہلے کی بات ہے کہ اقوام متحدہ نے سعودی عرب اور متحدہ عرب امارات کو اس حملے سے روکنے کے لئے اپنا نمائندہ مارٹن گریفتھس کو بھیجا تھا لیکن دونوں ممالک اس حملے کو صرف اس بات پر روکنے کے لئے تیار تھےکہ الحدیدہ پورٹ اور ایئرپورٹ کا کنٹرول ان کے پاس ہو یا کم ازکم یمنی افواج اور انصار اللہ کے کنٹرول میں نہ ہو۔

مُلا فضل اللہ کی ہلاکت، پاکستان اور خطے کے لیے ’اہم پیش رفت‘

مُلا فضل اللہ کی ہلاکت، پاکستان اور خطے کے لیے ’اہم پیش رفت‘

پاک افغان حکام نے گزشتہ دنوں افغانستان کے صوبہ کنڑ میں 13جون کو ایک امریکی حملے میں تحریک طالبان پاکستان کے سربراہ ملا فضل اللہ  کی ہلاکت کی  تصدیق کر دی جس کی موت پاکستان سمیت خطے کیلئے اہم پیشرفت قرار دی جارہی ہے۔

تخلیقی افراتفری کی ہوا کا رخ بحرین کی جانب

تخلیقی افراتفری کی ہوا کا رخ بحرین کی جانب

"تخلیقی افراتفری" یعنی Creative Chaos ایک سیاسی اصطلاح ہے جس کا مطلب یہ ہے کہ چند مخصوص افراد یا گروہ کسی ملک میں اپنے خاص مقاصد کے حصول کے لئے خود کو پوشیدہ رکھتے ہوئے افراتفری یا بحران پیدا کریں تاکہ اس بحران کے بعد تمام تر صورتحال کو اپنے حق میں کیا جاسکے۔

آل سعود کا خاندانی پس منظر؛ یہودیت سے سعودیت تک کا سفر (حصہ اول)

آل سعود کا خاندانی پس منظر؛ یہودیت سے سعودیت تک کا سفر (حصہ اول)

مرد خائی کے لاتعداد بیٹوں میں سے ایک بیٹے کا نام المقارن تھا، المقارن کے ہاں پہلا بیٹا پیدا ہوا جس کا نام محمد رکھا گیا تھا، محمد کے بعد القارن کے ہاں اس کے دوسرے بیٹے نے جنم لیا جس کا نام سعود رکھا گیا، یہودی مردخائی کے اسی بیٹے کی نسل بعد میں آل سعود کہلائی۔

آل سعود کا خاندانی پس منظر؛ یہودیت سے سعودیت تک کا سفر (حصہ دوئم)

آل سعود کا خاندانی پس منظر؛ یہودیت سے سعودیت تک کا سفر (حصہ دوئم)

1960 میں مصر کے دارالحکومت قاہرہ کے ریڈیو اسٹیشن «صوت العرب» اور یمن کے دارالحکومت صنعا کے ریڈیو اسٹیشن نے اس بات کی تصدیق کی کہ آل سعود کے آباء و اجداد یہودی تھے جبکہ خود سعودی بادشاہ شاہ فیصل نے بھی 17 ستمبر 1969 کو واشنگٹن پوسٹ کو دئے گئے ایک انٹرویو میں تسلیم کیا کہ اس کے آباء و اجداد یہودی تھے۔

سب سے زیادہ دیکھی گئی مقالات خبریں
مقالات کی شہ سرخیاں
اہم ترین خبریں
خبرنگار افتخاری